مسجد اقصی اور فلسطین کی آزادی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا،محمودعباس
  13  فروری‬‮  2018     |     یورپ

ماسکو(اشتیاق ہمدانی)فلسطین کے سربراہ محمود عباس نے ماسکو کی تاریخی مسجد میں واقع کمیونٹی ہال میں روس بھر سے آئے ہوئے مفتیوں کے ایک بڑے وفد سے ملاقات کی، جہاں انہوں نے یروشلم کی حیثیت کے معاملے میں فلسطینیوں کی حمایت کے حوالے روسی مفتیوں سے خطاب بھی کیا.محمود عباس نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ "آپ ہمارے ساتھ یکجہتی میں رہیں گے، یہ ہمارے لئے بہت اچھا امتحان ہے. ہمیں اپنی مقدس چیزوں کی حفاظت کرنی ہے.ہمیں اپنے دشمنوں کو اپنے حقوق کی خلاف ورزی سے روکنے کے لئے لڑنا ہوگا.ہم نے بہت سے ممالک کا دورہ کیا اور ہر جگہ اس پالیسی کے خطرے کی وضاحت کی.امریکہ کا یہ فیصلہ تمام بین الاقوامی قراردادوں اور فیصلوں سے متفق ہے جو کہ یہودی کہتے ہیں کہ یروشلم پر قبضہ ہوا تھا اور مشرقی یروشلم فلسطینی رہنما ہونا چاہئے.یاد رکھیں کہ دسمبر کے آغاز میں اسرائیل کی دارالحکومت کے طور پر یروشلم کی شناخت نے امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کا اعلان کیا.اقوام متحدہ کے جنرل اسمبلی نے اس مرحلے کے مطابق اسی قرارداد کی مذمت کی ہے، جس کے لئے 128 ممالک نے ووٹ دیا، 9 نے مخالفت کی اور، 35 ممالک نے رائے شماری میں حصہ نہیں لیا۔ روس کی مفتیوں کی کونسل کے سربراہ رواحیل گینتودینوچ نے کہا کہ مسجد اقصی اللہ تعالیٰ کا پہلا گھر ھے۔ روس کے مسلمان صدر محمود عباس کی پالیسی کی بھرپور حمایت کرتے ہیں۔ اور روس کے مسلمان مسجد اقصی کی زیارت کے لئے جائیں گے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مینں
loading...

 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved