برمنگھم کمیونٹی فورم کانشاندہی کے باوجودمسائل حل نہ ہونے پراظہارتشویش
  13  مارچ‬‮  2018     |     یورپ

برمنگھم (پ ر) برمنگھم کمیونٹی فورم کا ایک اہم اجلاس برمنگھم کمیونٹی فورم کے جنرل سیکرٹری فیصل محمود کی رہائش گاہ پر ہوا اجلاس میں فورم کے چیئرمین راجہ شوکت علی خان جنرل سیکرٹری مرزا فیصل محمود سینئر وائس چیئرمین نزابت علی وائس چیئرمین راجہ جاوید اقبال سیکرٹری اطلاعات غضنفر محمود' محمد لطیف غوری اور راجاسب علی نے شرکت کی کمیونٹی رہنمائوں نے اس بات پر تشویش کا اظہار کیا کہ برمنگھم کونسل کی لیبر حکومت کمیونٹی کے مسائل حل کرنے میں سنجیدہ نہیں ہے کیونکہ برمنگھم کمیونٹی فورم نے گزشتہ سال ایک پٹیشن برمنگھم سٹی کونسل میں جمع کروائی تھی جس پر تقریباً 12000 سے زائد دستخط تھے اور اب یہ دستخط بڑھ کر تیرہ ہزار سے بھی زائد ہوگئے ہیں اس پٹیشن کے تحت یہ ڈیمانڈ کی گئی تھی کہ اگر سینڈویل کونسل جوبرمنگھم سے چھوٹی کونسل ہے وہاں پوسٹ مارٹم کی بجائے سی ٹی سکین سے میت کی تھری ڈی امیج سے نتائج حاصل کرلئے جاسکتے ہیں تو برمنگھم کے شہریوں کے لئے بھی یہ سہولت موجود ہونی چاہئے اول تو یہ کہ میت کو پوسٹ مارٹم کے ذریعہ جو تکلیف دی جاتی ہے اور چیر پھاڑ کی جاتی ہے وہ نہیں ہوگی دوئم اس طرح میت جلد از جلد لواحقین کو دفنانے کے لئے ریلیز ہوسکے گی اس کے علاوہ ہینڈ ورتھ قبرستان جو بھرنے والا ہے اس کے بجائے انرسٹی میں قبرستان کی جگہ متعین کی جائے تیسرا مطالبہ تدفین کے مسائل دوسرے شہروں کے مقابلے میں زیادہ ہیں وہ کم کئے جائیں چوتھا مطالبہ کارانر سروس ہفتے کے ساتوں دن میسر ہونی چاہئے یہ چار مطالبے برمنگھم کمیونٹی فورم نے لبرل ڈیموکریٹ پارٹی کے کونسلرز جن ذاکر اﷲ خان اور کونسلر جان ہنٹ نے کونسل اجلاس میں پیش کئے تھے جن کا ٹوری پارٹی کے کونسلرز نے بھی حمایت کی تھی اس کے کچھ عرصہ بعد 15 دسمبر کو کونسل ہائوس کے ایک کمرے میں کونسلر ٹریسٹن چیٹ فیلڈ اور کونسلر ماجد محمود جو دونوں حضرات کیبنٹ ممبرز بھی ہیں انہوں نے برمنگھم کمیونٹی فورم کے وفد جن میں چیئرمین شوکت علی خان جنرل سیکرٹری فیصل محمود سینئر وائس چیئرمین نزابت علی وائس چیئرمین راجہ جاوید اقبال انفارمیشن سیکرٹری غضنفر محمود' کونسلر ذاکر اﷲ اور جیری مورنی نے ملاقات کی کیبنٹ ممبرز نے وفد سے تمام تفصیلات لی کے بی سی ٹی کا وفد کیا ڈیمانڈ کرتا ہے یہی تمام مطالبات جو اوپر درج کئے گئے ہیں نہ صرف دوبارہ دہرائے بلکہ اضافی مطالبہ کیا گیا کہ یہ تمام مطالبات فی الفور پورے کئے جائیں اور جب تک برمنگھم سٹی کا اپنا سی ٹی سکین نہیں ہوجانا میت کو اس وقت تک سینڈویل کونسل کا سی ٹی سکینر کو ریفر کیا جائے اور اس کا بل برمنگھم کونسل ادا کرے تاکہ برمنگھم کے شہریوں کو ریلیف فراہم کیا جائے دوسرا اضافی مطالبہ کہ مسلمانوں کے لئے علیحدہ انرسٹی میں قبرستان مختص کیا جائے اس موقع پر کیبنٹ ممبرز کونسلر ٹریسٹن چیٹ فیلڈ اور کونسلر ماجد محمود نے وفد کو یقین دلایا جلد از جلد برمنگھم کمیونٹی فورم کے اراکین کو ان تمام مطالبات کے بارے میں آگاہ کیا جائے گا مگر تین ماہ کا عرصہ گزر گیا ابھی تک لیبر حکومت کا جواب نہیں آیا آخر کیا وجوہات ہیں کہ لیبر حکومت عوامی مسائل اور مطالبات حل کرنے سے قاصر ہے اب وقت آگیا ہے کہ عوام کو اپنے حقوق کی جنگ خود لڑنا ہوگی اور لیبر بھیڑ چال کا خاتمہ کرنا ہوگا۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved