06:00 pm
شہباز شریف کو گرفتار کر کے اس کٹھ پتلی نظام نےاے پی سی کی قرارداد کی توثیق کر دی

شہباز شریف کو گرفتار کر کے اس کٹھ پتلی نظام نےاے پی سی کی قرارداد کی توثیق کر دی

06:00 pm

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک ) مسلم لیگ (ن)کے قائد نوازشریف نے مسلم لیگ ن کےاپوزیشن لیڈرشہباز شریف کی گرفتاری پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ آج شہباز شریف کوگرفتارکرکے اس کٹھ پتلی نظام نےاے پی سی کی قرارداد کی توثیق کی ہے۔ شہباز شریف نے پہلے ہی کہہ دیا تھا کہ وہ جیل کے اندر ہوں یا باہر،اے پی سی میں کئے گئے تمام فیصلوں پرعمل درآمد ہوگا،سماجی رابطےکی ویب سائٹ ٹوئٹر پراپنے ایک پیغام میں ان کا کہناتھا کہ شہباز شریف کی گرفتاری کے بارے میں انھوں نے قبل ازیں بتا دیا تھا کہ انہیں گرفتار کر لیا جائے گا، لیکن انھوں نے آل پارٹی کانفرنس کے
اعلامیے پر کاربند رہنے کا عزم بھی ظاہر کیا تھا، انھوں نے کہا کہ گرفتاری نے قرار داد کی توثیق کی ہے،جس پر مسلم لیگ (ن) کی قیادت عمل پیرا ہوگی۔ خیال رہے کہ قبل ازیں لاہورہائی کورٹ نے منی لانڈرنگ کیس میں شہباز شریف کی درخواست ضمانت مسترد کر دی جس کے بعد نیب نے شہباز شریف کوحراست میں لے لیا۔نیب کی ٹیم نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب کو کمرہ عدالت سے حراست میں لیا اور روانہ ہو گئی۔ نیب کی ٹیم شہباز شریف کو لے کر نیب لاہور آفس پہنچ گئی۔ نیب آفس میں سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کا ابتدائی طبی معائنہ کیا گیا۔ گرفتاری سے قبل شہباز شریف نے عدالت میں کہا کہ نیب کو ڈھائی سو سال لگ جائیں گے لیکن ایک دھیلے کی کرپشن نہیں ملے گی۔انہوں نے کہا کہ دن رات محنت کرکے پنجاب کے عوام کی خدمت کی۔ سندھ کے مقابلے میں گنے کی قیمت زیادہ رکھی اور سبسڈی بھی نہیں دی۔ اس سے ان کے بچوں اور عزیزوں کی شوگر ملز کو نقصان ہوا۔ قومی خزانے کا ایک ہزار ارب بچایا، اپنے ضمیر کے مطابق فیصلے کیے۔ شہباز شریف نے کہا کہ نیب کے وکیل نے کہا انیس سو نوے میں شہباز شریف کے اثاثے بائیس لاکھ روپے تھے جو دو ہزار اٹھارہ میں سات ارب تک پہنچ گئے۔ کوئی اس غلط فہمی میں نہ رہے کہ ایسے اوچھے ہتھکنڈوں سے ہمیں جھکایا جا سکتا ہے۔واضح رہےکہ قومی احتساب بیورو (نیب) نے آج لاہور میں رقوم کی بیرون ملک غیر قانونی منتقلی کے مقدمے میں قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو گرفتارکیا ہے۔

تازہ ترین خبریں