11:32 am
درجنوں افرادکی موجودگی میں نوجوان کاڈوبناغفلت ہے، سلطان رئیس

درجنوں افرادکی موجودگی میں نوجوان کاڈوبناغفلت ہے، سلطان رئیس

11:32 am

گلگت(اوصاف نیوز) درجنوں افراد کی موجودگی میں نوجوان کا دریا برد ہونا غفلت کی بدترین مثال ہے اور بغیر حفاظتی اقدامات نوجوانوں کو تربیتی مراحل سے گزارنے پر آئی جی سمیت متعلقہ حکام کو برطرف کرکے قانونی کارروائی کی جائے ستم بالائے ستم تین دنوں سے نوجوان کا بازیاب نہ ہونا صوبائی حکومت کے منہ پر طمانچہ ہے. ان خیالات کا اظہار مولانا سلطان رئیس چئیرمین عوامی ایکشن کمیٹی نے اپنے بیان میں کیا انہوں نے مزید کہا کہ گلگت
بلتستان کے تمام محکمے اندرونی طورپر بدحالی کا شکار ہیں ناتجربہ کار عملے کی بھرمار ہے تو تربیت اور وسائل ضروریہ سے ادارے خالی ہیں. کئی بار اس طرح کے واقعات کے رونما ہونے کے باوجود اقدامات کا نہ اٹھانا افسوسناک ہے. انہوں نے کہا کہ حالیہ پولیس نوجوانوں کا دل سوز واقعہ محکمے کی نااہلی کا نتیجہ ہے سردی کے موسم میں صبح کے وقت بغیر کسی احتیاطی تدابیر دریا میں نوجوانوں کو اتارنا مذموم عمل ہے اس جرم کے اندر آئی جی گلگت بلتستان سمیت دیگر تمام ذمداران برابر کے شریک ہیں. اور ریسکیوں اداروں میں ضروریہ وسائل کی فراہمی کیلئے صوبائی حکومت فوری اقدامات اٹھائے. مزید اس طرح کے واقعات سے قبل تدارک لازمی ہے۔

تازہ ترین خبریں