05:37 pm
پنجاب فوڈاتھارٹی سے مضرصحت قرارخوردنی تیل غذرمیں فروخت ہونے لگا

پنجاب فوڈاتھارٹی سے مضرصحت قرارخوردنی تیل غذرمیں فروخت ہونے لگا

05:37 pm

غذر (بیورو رپورٹ ) پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے مضر صحت قرار دئیے جانے والے خوردنی تیل کی بڑی مقدار غذر میں فروخت ہونے لگی اشکومن یاسین اور پھنڈر کے علاقوں میں یہ مضر صحت اشیاء اب بھی فروخت ہورہے ہیں مگر انتظامیہ مکمل طور پر خاموش ہے پنجاب فوڈ اتھارٹی نے چار درجن کے قریب خوردنی تیل اور گھی کو مضر صحت قرار دیا تھا جس کے بعد گلگت بلتستان میں بھی ان اقسام کے تیل اور گھی کی فروخت پر پابندی کے باوجود غذر میں کھلے
عام دکاندار مضر صحت قرار دیئے جانے والے تیل اور گھی کو فروخت کرتے ہیں مگر انتظامیہ مکمل طور پرع خاموش ہے اور بعض دکانداران مضر صحت اشیاء کو فروخت کررہے ہیں دوسری طرف مضر صحت قرار دیا جانے والا دودہ بھی بڑی مقدار میں مارکیٹ میں موجود ہے مگر متعلقہ حکام کی غفلت کی وجہ سے عوام یہ مضر صحت گھی ،تیل اور دودہ کو استعمال کر رہیں مگر کوئی ان افراد کو لگام دینے والا نہیں جو انسانی جانوں سے کھیل رہے ہیں دوسری طرف غذر میں ایک طرف مضر صحت گھی ،تیل اور دودہ فروخت ہورہا ہے تو دوسری طرف زائد المیاد قسم کے مصالحہ جات اور کولڈ درنک بھی فروخت کیا جارہا ہے انتظامیہ کے بڑے اپنے دفتروں تک محدود ہوکر رہ گئے ہیں عوام کا کوئی پرسان حال نہیں عوامی حلقوں نے چیف سیکرٹری گلگت بلتستان سے غذر میں مضر صحت خوردنی تیل اور گھی فروخت کرنے والے افراد کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

تازہ ترین خبریں