05:28 pm
 گلگت کو اگلے سال تک پلاسٹک فری بنائیںگے،حفیظ الرحمٰن

گلگت کو اگلے سال تک پلاسٹک فری بنائیںگے،حفیظ الرحمٰن

05:28 pm

گلگت( فہیم اختر) وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن نے کہا ہے کہ پرائیویٹ سکولوں کے نصاب اور دیگر ضروری اقدامات کے لئے پرائیویٹ سکولز ریگولیشن ایکٹ لائیںگے جس میں اس بات کو دیکھا جائیگا کہ پرائیویٹ سکولز کس قسم کا نصاب پڑھارہے ہیں، مسلکی اور علاقائی نصاب کی اجازت نہیں دیگی ، نصاب تعلیم ملک و قوم اور اسلامی سوچ کے مطابق ہوگا۔منشیات کے خاتمے کے لئے جی بی ٹوبیکورجسٹریشن ایکٹ لارہے ہیں
جو اس وقت قائمہ کمیٹی میںہے اور متوقع طور پر اگلے اسمبلی اجلاس میں منظور کیا جائیگا۔ محکمہ تعلیم کے آفیسران اور اساتذہ کے بچوں کی سرکاری سکولوں میں داخلے کے حوالے سے تمام ڈیٹا اکھٹا کرلیا گیا ہے ، جس میں صرف 21فیصد ایسے آفیسران اور اساتذہ کی نشاندہی ہوئی ہے جو اس وقت دیگر سکولوں میں زیر تعلیم ہیں۔ خواتین کے لئے الگ یونیورسٹی کے لئے منظوری لینے کے باوجود تحریک انصاف حکومت کے فنڈز روک لئے اور اب مزید امید بھی نہیں ہے کہ فنڈز جاری کئے جائیںگے جس کے لئے ہم نے فاطمہ جناح کالج کے ساتھ ہی جی بی سکائوٹس کے پاس سرکاری اراضی کو خالی کرایا ہے جس کو پوسٹ گریجویٹ کالج بنائیںگے جہاں پر طالبات ایم فل تک تعلیم حاصل کرسکیںگی ۔ اگلے سال تک گلگت کو بھی پلاسٹک فری بنائیںگے۔ گلگت میں ایک نجی سکول کی سالانہ تقریب تقسیم اسناد سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے حافظ حفیظ الرحمن نے مزید کہا کہ منشیات کی لعنت سے شہر کو پاک کرنے کے لئے جی بی ٹوبیکو رجسٹریشن ایکٹ متعارف کرائیںگے جس میں 18سال سے کم عمر کے بچوں کو سگریٹ بیچنے پر مکمل پابندی عائد ہوگی اور ہر دوکاندار کو اس بات کی اجازت نہیں ہوگی کہ وہ سگریٹ بیچیں۔ ترقی یافتہ ممالک میں سگریٹ کے میلوں کا سفر طے کرنا پڑتا ہے جبکہ بدقسمتی سے ہمارے ہاں کھوکھے سے لیکر بیکری اور کریانے والے بھی سگریٹ بیچتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ خواتین کے لئے صحت مندانہ سرگرمیاں متعارف کرانے ، باہنر بنانے اور سماجی رابطے بڑھانا ہمارا مقصد تھا جس کے لئے جہاں مکمل طور پر خواتین کے لئے پارک بنایا گیا ہے جس میں لائبریری، جم اور ٹرینر کی سہولیات دستیاب ہونگی وہی پر الگ یونیورسٹی کا قیام بھی ہمارا خواب تھا جس کی منظوری ن لیگ کی گزشتہ وفاقی حکومت سے لی تھی مگر موجودہ وفاقی حکومت نے اس کے فنڈز روک لئے ، اب اس حوالے سے امید بھی ختم ہوگئی ہے کہ فنڈز ریلیز ہونگے جس کے لئے ہم نے متبادل طور پر جی بی سکائوٹس کی سابقہ ہیڈکوارٹر آفس میں خواتین کے لئے پوسٹ گریجویٹ کالج بنانے کا فیصلہ کرلیا ہے جہاں پر پردے میں رہتے ہوئے طالبات ایم فل تک کی ڈگری حاصل کرسکیںگے۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان واحد صوبہ ہے جہاں پر 6اضلاع میں ویسٹ منیجمنٹ کمپنی فعال ہے اور آئندہ سال تک اسے تمام اضلاع تک توسیع کرکے پورے جی بی کو ویسٹ فری بنائیںگے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ پرائیویٹ سکول ریگولیشن ایکٹ کے قیام کا مقصد جہاں نصاب تعلیم دیکھنا ہے وہاں پر ان سکولوں کو سرکاری تعاون دینا بھی ہے۔ صوبائی حکومت نے تعلیم کے شعبے میں ایک ارب کی رقم سے انڈومنٹ فنڈزقائم کیا ہے جس کے زریعے پرائیویٹ سکولوں کے طلبہ و طالبات کی مدد کی جائے گی،بدقسمتی سے جی بی کونسل کے 3ارب روپے ابھی تک وفاق نے ہمیں منتقل نہیں کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گلگت شہر میں ٹریفک کا نظام درست کرنے کے لئے ٹریفک منیجمنٹ اور اربن منی ٹرانسپورٹ متعارف کرائیںگے جو ایک بہت بڑا مسئلہ ہے۔قبل ازیں سکول پرنسپل فیروز احمد نے خطاب کرتے ہوئے سالانہ کارکردگی پیش کی اور مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ کے استقبال اور سالانہ تقریب کے سلسلے میں قوالی، ٹیبلو اور نغمات بھی پیش کئے گئے۔ جبکہ وزیراعلیٰ نے نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والے طلبہ میں انعامات بھی تقسیم کئے اور طلباء کے لئے نقد تیس ہزار روپے جبکہ سکول انتظامیہ کے لئے دولاکھ روپے کا اعلان کیا۔

تازہ ترین خبریں