05:46 pm
ادویات کی خریداری میں سب سے کم بولی دینے کی شرط ختم کی جائے(پی اے سی کی سفارش)

ادویات کی خریداری میں سب سے کم بولی دینے کی شرط ختم کی جائے(پی اے سی کی سفارش)

05:46 pm

گلگت ( اوصاف نیوز ) پبلک اکائونٹس کمیٹی کا محکمہ صحت کے مالی سال 2013-14 کے آڈٹ پیروں کے حوالے سے اجلاس چیئرمین کیپٹن(ر) سکندر علی کی صدارت میں گزشتہ روز اسمبلی کے کمیٹی روم میں منعقد ہوا۔اجلاس میں کمیٹی کے ممبران ،ممبر اسمبلی راجہ جہانزیب ،ممبراسمبلی رانی عتیقہ غضنفر ،ممبر اسمبلی نسرین بانو،محکمہ صحت اور آڈٹ ڈپارمنٹ کے زمہ داروں نے بھی شر کیا۔کمیٹی کے اجلاس میں یہ بات سامنے آگئی ہے
کہ گلگت بلتستان کے سرکار ی ہسپتال ادویات کی بغیر لیبارٹری ٹیسٹ کے عوام کو دینے پر مجبور ہیں اور پیپرا رولز کی وجہ سے غیر معیاری ادویات سرکاری ہسپتالوں کو سپلائی ہورہی ہیں۔کمیٹی کے اجلاس میں غیر معیاری ادویات کی خریداری کے حوالے سے آڈٹ پیرا سامنے آیا جس پر محکمہ صحت نے واضح کیا کہ بغیر لیبارٹری ٹیسٹ کے ادویات عوا م کو فراہم کرنا اس کی مجبوری ہے کیونکہ ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹری پہلے گلگت بلتستان میں نہیں تھی ابھی بن چکی ہے تاہم اس میں بھی تمام ادویات کو ٹیسٹ کرنے کے لیے سہولیات ناکافی ہیں۔جب ٹھکیہ دار ادویات سپلائی کرتا ہے تو ڈرگ انسپکٹر اس کے نمونے لیکر ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹری بھیجتے ہیں اور اس کی لیبارٹری رپورٹ آنے تک تین مہینے کا عرصہ گزر جاتا ہے۔اس عرصے میں عوام کو ادویات فراہم کرنا محکمے کی مجبوری ہے۔پیپرا رولز کے تحت سب سے کم بولی دینے والے ٹھیکہ دار کو ٹھیکہ دینا لازمی ہے،ٹھیکہ دار ٹھیکہ حاصل کرنے کے لیے کم بولی دیتے ہیں اور ٹھیکہ حاصل کرنے کے بعد وہ سستی اور غیر معیاری ادویات کی سپلائی کرتے ہیں۔اس پر کمیٹی نے سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا یہ انتہائی اہم مسئلہ ہے انسانی زندگیوں کا سوال ہے۔اس پر حکومت کو ہنگامی اقدامات کرنے کی ضرورت ہے ۔کمیٹی نے حکومت کو سفارش کی ہے جلد از جلد رولز میں ترمیم کرکے بغیر لیبارٹری ٹیسٹ کے ادویات کی فراہمی پر پابند ی لگائے اور ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹری کو اپ گریڈ کرکے تما م ضروری سہولیات وہاں پر یقینی بنائیں۔کمیٹی نے حکومت سے یہ بھی سفارش کی ہے پیپرا رولز میں ترمیم کرکے ادویات کی خریداری میں سب سے کم بولی دینے کی شرط کو ختم کرے اور معیار ی ادویات کی سپلائی کو یقینی بنا نے کے لیے تما م وسائل بروکار لائے۔کمیٹی نے اجلاس میں محکمہ قانون اور محکمہ فنانس کے نمائندوں کی عدم شرکت پر برہمی کا اظہار کیا اور آئندہ اجلاس میں انکی شرکت یقینی بنا نے ہدایت کی ہے۔اجلاس میں کمیٹی کے سامنے محکمہ صحت کے متعد د آڈٹ پیرے پیش کیے گئے جن آڈٹ پیروں پر محکمے نے کمیٹی کو مطمئن کیا انکو سیٹل قرار دیا اور جن آڈٹ پیروں پر کمیٹی مطمئن نہ ہوئی انھیں برقرار رکھتے ہوئے مزید ریکارڈ طلب کیا ہے۔

تازہ ترین خبریں