06:11 pm
محکمہ پولیس نے رمضان المبارک کیلئے سکیورٹی پلان تشکیل دیدیا،گلگت 3سیکٹرزمیں تقسیم

محکمہ پولیس نے رمضان المبارک کیلئے سکیورٹی پلان تشکیل دیدیا،گلگت 3سیکٹرزمیں تقسیم

06:11 pm

گلگت (محمد ذاکر سے) محکمہ پولیس نے رمضان المبارک کے سیکورٹی پلان تشکیل دیدیا گلگت 3 سیکٹرز میں تقسیم ،169 مساجد میں سے 9 مساجد انتہائی حساس،23 حساس اور 137 مساجد کو نارمل قرار دیدیاگیا۔ عوام کے جان و مال کی حفاظت یقینی بنانے اور کسی بھی ممکنہ ناخوشگوار واقعات سے نمٹنے کے لئے 281 پولیس نماز تراویج سیکورٹی کے لئے تعینات کرکے 102 پولیس جوانوں کو پیٹرولنگ ڈیوٹی اور 60 اہلکاروں کو پولیس لائن ہائی الرٹ رہنے کی احکامات جاری کردئیے ہیں۔
تفصیلات کے مطابق محکمہ پولیس نے رمضان المبارک سیکورٹی پلان تشکیل دیتے ہوئے گلگت کو تین ژون میں تقسیم کردیا گیا ہے ضلع گلگت میں ٹوٹل 169 مساجد میں سے 23 کو حساس جبکہ 9 مساجد جن میں مرکزی جامع مسجد اہل سنت ،موتی مسجد گھڑی باغ ،یادگار مسجد ،کلمہ چوک مسجد ،نپورہ بسین مسجد، بیت المقرم مسجد،مغل پورہ مسجد، شیر ولی مسجد جوٹیال ،توبہ مسجد سکوار کو انتہائی حساس قرار دیدیا گیا ہے نماز تراویج کے دوران عوام کے جان و مال کی حفاظت یقینی بنانے کے لئے اور کسی بھی ناخوشگوار واقعات سے بروقت نمٹنے کے لئے 281 پولیس جوانوں کو مساجد ڈیوٹی کے لئے تعینات کرتے ہوئے پیٹرولنگ گاڑیوں جن میں سارگن ،ایگل 92 پولیس جوانوں کو ہائی الرٹ رہنے کے احکامات دئیے ہیں جبکہ کسی بھی ممکنہ ناخوشگوار واقع سے بروقت نمٹنے کے لئے خصوصی کنٹرول رومز تعینات کرکے 40 ریزرو نفری کو پولیس لائن میں الرٹ رہنے کے خصوصی ہدایات دئیے گئے ہیں۔ ایڈیشنل ایس پی ضلع گلگت محمد ایاز نے اوصاف کو تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے کہاہے کہ ایس ایس پی گلگت مرزا حسین کے حکم پر محکمہ پولیس نے رمضان المبارک سیکورٹی پلان جاری کردیا ہے محکمہ پولیس نے عوام کے جان ومال کی حفاظت کے لئے اور کسی بھی ناخوشگوار واقعات سے بروقت نمٹنے کے لئے حکمت عملی تیار کرلی ہے گلگت کے 169 مساجد میں سے 23 حساس 9 انتہائی حساس اور 137 کو نارمل قرار دیکر Sdpo ،ایس ایچ او کی نگرانی میں 281 پولیس جوان مساجد سیکورٹی کے لئے ہائی الرٹ کردیا گیا ہے جبکہ تمام سیکورٹی پلان کی نگرانی ایڈیشنل ایس پی کریں گے۔ انہوںنے کہاکہ نماز تراویج کے اوقات سیکورٹی یقینی بنانے کے لئے سارگن کی 12،ایگل کی 10 گاڑیوں پر مشتمل 92 جوان تعینات کردی ہیں نارمل مسجد میں1 حساس کے لئے 2اور انتہائی حساس مساجد سیکورٹی کیلئے 4 پولیس جوانوں کو تعینات جبکہ پولیس لائن گلگت میں خصوصی کنٹرول روم اور ریزو کے 40 اہلکاروں کو ہائی الرٹ کردیا گیا ہے۔ عوام کا بھی فرض بنتا ہے کہ وہ مشکوک افراد پر کڑی نگرانی کریں اور سیکورٹی اہلکاروں کے ساتھ مکمل تعاون یقینی بنائیں۔ انہوںنے کہاکہ سیکورٹی کے لئے تعینات اہلکاروں کو ہدایات دی ہیں کہ ڈیوٹی سے غفلت نہ برتیں ڈیوٹی سے غفلت کے مرتکب پولیس آفیسران و جوانوں کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا۔ گلگت (وقائع نگار خصوصی) آئی جی پی گلگت بلتستان نے نماز تراویج سیکورٹی کے لئے تعینات پولیس اہلکاروں کو ایک گھنٹہ پہلے مساجد سیکورٹی یقینی بنانے کے احکامات جاری کردئیے۔ پولیس ذرائع کے مطابق انسپکٹر جنرل آف پولیس گلگت بلتستان ثناء اللہ عباسی نے رمضان سیکورٹی پلان جاری کرتے ہوئے نماز تراویج سیکورٹی پولیس جوانوں کو سختی سے ہدایات دی ہے کہ نماز تراویج سے ایک گھنٹہ قبل اپنے فرائض بخوبی سرانجام دیں غفلت کے مرتکب پولیس آفیسران و جوانوں کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔ پولیس ذرائع کے مطابق محکمہ پولیس نے کسی بھی ممکنہ ناخوشگوار واقعات سے بروقت نمٹنے کے لئے 40 ریزرو پولیس جوان پولیس لائن میں ہائی الرٹ کرکے پولیس کنٹرول روم قائم کیا ہے اور 102 پولیس جوانوں کو پیٹرولنگ کے لئے تعینات کردیا ہے۔گلگت(اوصاف نیوز)ڈپٹی کمشنر / ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ گلگت کیپٹن (ر) سمیع اللہ فاروق کی زیر صدارت ایک اہم میٹنگ ماہ ر مضان المبارک کی انتظامات کے حوالے سے منعقد ہوئی ۔جس میں ایس ایس پی گلگت ، میجر سندھ رجمنٹ ، او سی جی بی سکائوٹس، اے سی گلگت ، اسسٹنٹ کمشنر عملدر آمد گلگت، اے سی دنیور، ایکسی این پی ایچ ای ، اے سی جگلوٹ ، ADO FCیوٹیلٹی سٹورز کے ریجنل منیجر اور دیگر آفیسران نے شرکت کی ۔ڈی سی گلگت نے ایکسی این پی ایچ کو ہدایت کی کہ وہ ماہ رمضان میں گلگت شہر کو پانی کی سپلائی کو بحال کریں۔ ڈی سی گلگت کو ضلع گلگت میں تمام مساجد میں تراویح کے سکیورٹی کے حوالے سے ایس ایس پی گلگت نے بریفگ دیتے ہوئے کہا کہ ٹوٹل مساجد 169ہے ان میں سے حساس مساجد 18ہیں اور 09مساجد انتہائی حساس ہیں ۔ جس پر ڈی سی گلگت نے ضلع گلگت میں موجود تمام مساجد کی سکیورٹی کو فول پرروف بنایا جائے تاکہ پرامن ماحول کو برقرار رکھا جاسکے۔جی بی سکائوٹ اور رینجر اپنے چیک پوسٹوں پر ہائی الرٹ رہیں گے اور انِ کی QRFکی ٹیمیں گشت کے نظام کو سخت سے سخت بنانے کی تاکید کی ہے۔ اس کے علاوہ ڈی سی گلگت نے اے سی گلگت کو بھی احکامات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام مجسٹریٹوں کی بھی ڈیوٹیوں کو بھی یقینی بنائیںاور مزید کہا کہ رمضان بازار لگانے کا انتظام کیا جائے اور تینوں اے سی ز کو مذیدہدایات دیتے ہوئے کہا کہ ماہ رمضان میں پرائس کنٹرول لسٹ اور مارکیٹ کی چیکنگ کریں بلخصوص قصاب خانوں کا بھی جائزہ لیکر روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ پیش کریںنیز ایک مجسٹریٹ کے ساتھ تین پولیس کے اہلکاروں کو شکایات درج کرینگے عوام الناس اگر کوئی بھی دکاندار ذخیرہ اندوزی ،بلیک مارکیٹنگ اور زائد میعاد ایشیا کو فروخت کرے گا فوری طور پر اپنی شکایا ت درج کرواسکتے ہیں اور موقع پر جاکر قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔ڈی سی گلگت نے یوٹیلٹی سٹورز کے ریجنل منیجر اور نیٹکو کے سٹورز کو سختی سے ہدایت دی کہ یوٹیلیٹی سٹورز اپنے سٹاک سے متعلق روزانہ کی بنیاد پر ڈی سی آفس میں رپورٹ پیش کرینگے۔ڈی سی گلگت تینوں سب ڈویژن کے اسسٹنٹ کمشنرز کو ہدایت جاری کرتے ہوے کہا کہ اپنے اپنے سب ڈویژن میں یوٹیلٹی سٹور ز چیکنگ کرائیںتاکہ اشیاء خوردنوش اور گھی ، چینی وغیرہ کا جائزہ لیں۔

تازہ ترین خبریں