06:06 pm
UNDP وفدکاششپرگلیشیرکادورہ(پانی کااخراج شروع،کوئی خطرہ نہیں،فریداحمد)

UNDP وفدکاششپرگلیشیرکادورہ(پانی کااخراج شروع،کوئی خطرہ نہیں،فریداحمد)

06:06 pm

ہنزہ (اوصاف نیوز ) ایڈیشنل سیکریٹری برائے وزارت ماحولیاتی تغیرات بابر حیا ت تارڑ کی سربراہی میں UNDP کے وفد نے ششپر گلیشیر ہنزہ کا دورہ کیا۔UNDP کے وفد میں گلوف کے ماہرین بھی شامل تھے۔ اس موقع پر وفد کو بریفنگ دیتے ہوئے گلگت بلتستان ڈیزاسٹر مینیجمنٹ اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل فرید احمد نے بتایا کہ گلیشئر کے پھیلائو سے بننے والی جھیل سے پانی کا اخراج شروع ہو چکا ہے،جس کی مقدار 200کیوسک روزانہ ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ ماہرین کے مطابق پانی کا اخراج جاری رہے گا
اور جھیل کے پھٹ جانے کے نتیجے میں نقصانات ہونے کا بالکل بھی امکان نہیں، اس لیئے عوام کو ہر گز خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں۔ انہوں نے وفد کو یہ بھی بتایا کہ جھیل کے سرکنے کا عمل بھی کم ہوچکا ہے۔ ساتھ ہی ساتھ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے غزن آباد واٹر چینل کی کشادگی کا کام بھی مکمل کیا جا چکا ہے۔ انہوں نے حسن آباد سے ملحقہ علی آباد کو پینے کے صاف پانی کی چوس نالے سے فراہمی کو یقینی بنانے کے لئے بھی کام جاری ہے اور یہ پراجیکٹ ایک مہینے میںمکمل ہو گا۔ مقامی آبادی کو کسی بھی طرح کے نقصان سے بچانے کے لیئے حفاظتی بند اور دیواریں بھی مکمل ہو گئی ہیں۔ اقوام متحدہ کے ادارے کی جانب سے وفد کی قیادت پاکستان میں UNDPکے ریزیڈنٹ نمائندے اگنیسیو ارتضی کر رہے تھے۔ دورے کے موقع پر وفد کو بتایا گیا کہ حکومت گلگت بلتستان کی جانب سے کسی بھی ناگہانی صورتحال سے نمٹنے کے لئے تمام تیاریاں مکمل ہیں۔ اس سلسلے میں پہلی ترجیح انسانی جانوں کا بچاو ہے۔ ساتھ ہی ساتھ آمد و رفت کے زرائع مسدود ہونے کی صورت میں ادویات اور خوراک کی ترجیحی بنیادوں پر فراہمی کے لئے بھی گلگت بلتستان ڈیزاسٹر مینیجمنٹ اتھارٹی اور ڈسٹرکٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کی جانب سے اقدامات مکمل کر لیئے گئے ہیں۔ گلگت بلتستان ڈیزاسٹر مینیجمنٹ اتھارٹی کے سربراہ فرید احمد نے وفد کو مزید بتایا کہ حسن آباد نالے پر قائم پل کو نقصان پہنچنے کی صورت میں متبادل راستے اور پل کا انتظام بھی کیا جا چکا ہے۔ اس موقع پر ڈسٹرکٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے سربراہ ڈی سی ہنزہ بابر صاحب دین اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر جی بی ڈی ایم اے شہزادبیگ بھی موجود تھے۔ وفد نے گلگت بلتستان حکومت کی جانب سے کی جانے والی تیاریوں کو اطمینان بخش قرار دیا اور کہا کہ اداروں کے اشتراک سے انسانی جانوں او ر مال کی حفاظت کے لیئے کیے جانے والے اقدامات قابل تعریف ہیں۔

تازہ ترین خبریں