06:02 pm
نجی تعلیمی اداروں کاطلباکوچھٹیوں کی فیس جمع کرانے کانوٹس،والدین پریشان

نجی تعلیمی اداروں کاطلباکوچھٹیوں کی فیس جمع کرانے کانوٹس،والدین پریشان

06:02 pm

گلگت (وقائع نگار خصوصی) گلگت بلتستان میں موجود پرائیویٹ سکولز مالکان سے تعلیم کو اپنے لئے روزگار کا ذریعہ بنادیا گرمیوں کے چھٹیوں کی تین ماہ کی فیس جمع کرانے کے لئے تحریری نوٹس جاری کرنے پر والدین ذہنی و دل کے امراض میں مبتلا ہونے لگیں ۔صوبائی حکومت فوری نوٹس لیکر تعلیم کے نام پر غریبوں کو لوٹنے والے پرائیویٹ سکولز مالکان کے خلاف کریک ڈاون کرنے کے احکامات جاری کریں
متاثرہ والدین کا وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان سے پرزور اپیل۔ تفصیلات کے مطابق گلگت بلتستان باالخصوص دارالخلافہ گلگت اور مضافات میں ہر قدم پر موجود پرائیویٹ سکولز مالکان نے تعلیم کو اپنے لئے کاروبار کا ذریعہ بناکر والدین کو لوٹنے کا سلسلہ تیز کردیا ہے چھٹیوں کی فیس اکٹھی کرنے پر پابندی کے باوجود گرمیوں کے چھٹیوں سمیت ایک ماہ کے اضافی فیس جمع کرانے کے لئے تحریری نوٹس جاری کردئیے گئے ہیں جس کی وجہ سے والدین اور طلباء سخت پریشانی میں مبتلا ہوگئے ہیں۔ متاثرہ والدین نے اوصاف سے گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ نجی سکولوں کے مالکان نے طلباء و طالبات کی فیسوں میں اضافہ کرنے کے ساتھ گرمیوں کے چھٹیوں سمیت مزید ایک ماہ کی اضافی فیس جمع کرنے کے نوٹس جاری کردئیے ہیں چیک اینڈ بیلنس نہ ہونے کی وجہ سے پرائیویٹ سکولز مالکان نے تعلیم کو کاروبار کا ذریعہ بنادئیے ہیں تین ماہ کی فیس جمع نہیں کرسکتے ہیں ۔انہوںنے وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن، فورس کمانڈر گلگت بلتستان، چیف سیکریٹری گلگت بلتستان سے اپیل کی ہے کہ وہ فوری نوٹس لے کر پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے مالکان کے خلاف کاروائی کرنے کے احکامات جاری کریں تاکہ والدین پر فیسوں کے مد میں بوجھ نہ پڑیں اور بچوں کی تعلیم بھی متاثر نہ ہوں۔

تازہ ترین خبریں