موجودہ حکومت بیوروکریسی کے سامنے بھیگی بلی بنی ہوئی ہے،سید مہدی شاہ
  11  اکتوبر‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

سکردو(اوصاف نیوز) سابق وزیر اعلیٰ سید مہدی شاہ نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت بیوروکریسی کے سامنے بھیگی بلی بنی ہوئی ہے ، ہم نے بہت پہلے کہ دیا تھا کہ اس حکومت کی حیثیت ڈمی کے سوا کچھ بھی نہیں ، آج ن لیگ کے اپنے ہی ممبران اسمبلی میری بات کی تائید کر رہے ہیں ، ن لیگ کے رکن اسمبلی میجر امین نے صوبائی حکومت کی کارکردگی کا پول کھول دیا ، ان کے بقول عملی طور پر حکومت بیوروکریسی کی ہے ، عوامی نمائندوں کی حیثت ڈمی کے سوا کچھ نہیں ، آج ن لیگی اراکین اسمبلی بھی میری باتوں کی تائید کر رہے ہیں ، ن لیگی اراکین اسمبلی کی حیثت صرف تنخواہ دار ملازمین کی سی رہ گئی ہے ، ن لیگ کی حکومت کے لیے ڈھوب مرنے کا مقام ہے ، اگر ان کی حیثت کوئی نہیں ، اور ان کی بات کوئی سنتا نہیں اور عملی طور پر ان کی حکومت نہیں تو انہیں استعفیٰ دے کر گھر بیٹھنا چاہیے ، ایک طرف ن لیگ کے ڈمی وزراء اور وزیر اعلیٰ میرٹ کی بحالی اور رشوت کلچر کے خاتمے کی باتیں کرتے نہیں تھکتے تو دوسری طرف ان کی اپنی ہی حکومت کے ایک

اہم وزیر جانباز خان نے ن لیگی حکومت کی نام نہاد میرٹ کا پول کھول کے رکھ دیا ، این ٹی ایس جیسے ادارے نے جانباز خان سے رشوت کا مطالبہ کیا تو پھر ہمیں بتائیں کہ میرٹ کہاں اور کیس اداے میں ہے ، ن لیگ نے کریشن کی گنگا ہی خشک کر دی ہے ، اپنے رشتہ داروں کو نوازنا اور اپنے من پسند افراد کو ٹھیکے دینا ہی ن لیگ کے نزدیک میرٹ ہے ، ن لیگی حکومت نے بیوروکریس کے آگے گھٹنے ٹیک لیے ہیں ، بیوروکریسی کے آگے ن لیگ کی ایک نہیں چل رہی ، انہوں نے کہا کہ ن لیگ گلگت بلتستان کے ساتھ کس حد تک مخلص ہے اس کا انداز ہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ وزیر اعظم پاکستان کو گلگت بلتستان کونسل کے وجود کا پتہ ہی نہیں تھا ، وہ تو یہ بھی نہیں جانتے تھے کہ گلگت بلتستان کونسل کے وہ چیئرمین بھی ہیں ،ن لیگ کے وزیر اعظم کو گلگت بلتستان کے کونسل کے وجود تک کا پتہ نہیں تھا ، جس حکومت کے وزیر اعظم کو گلگت بلتستان کے ایک اہم ادارے کو سرے سے پتہ ہی نہیں ہو وہ جماعت گلگت بلتستان کے عوام کے لیے کیا کر سکتی ہے ، ن لیگ نے آج تک گلگت بلتستان کے عوام کو سوائے دھوکے کے کچھ نہیں دیا ، عوام کو جب کبھی بھی کچھ ملا ہے تو وہ پیپلزپارٹی کے دور میں ہی ملا ہے ، عوام نے اب دوبارہ ن لیگ کو ووٹ نہ دینے کی قسم کھا لی ہے ، عوام ایک بار پھر اپنے مسائل کے حل کے لیے پیپلزپارٹی کی طرف دیکھ رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ن لیگ ٹیکس نافذ کر کے عوامی مشکلات میں اضافہ کرنا چاہتی ہے ، ن لیگ والے ٹیکس کے نفاز کا نزالہ ہم پر گرانے کی کوشش کر ہے ہیں اگر ٹیکس ہم نے فافذ کیا تھا تو پھر آج اسمبلی میں ن لیگ کی اکثریت ہے وہ اس بل کو اسمبلی میں پیش کر کے ٹیکس کے نفاز کو مسترد کیوں نہیں کر رہی ۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved