گلگت،جمعیت علماء اسلام گلگت بلتستان کا ایک اہم اور غیر معمولی اجلاس آج گلگت میں منعقد ہوا
  11  ‬‮نومبر‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

گلگت(نامہ نگار خصوصی)جمعیت علماء اسلام گلگت بلتستان کا ایک اہم اور غیر معمولی اجلاس آج گلگت میں منعقد ہوا، اجلاس کی صدارت جے یوآئی گلگت بلتستان کے امیر مولانا سید سرورشاہ نے کی۔اجلاس میں صوبائی مجلس عاملہ(کابینہ)کے اکثر اراکین سمیت جے یوآئی کے سینئر رہنماؤں نے شرکت کی۔ شرکت کرنے والوں میں خطیب جگلوٹ سینئرنائب امیر جے یوآئی جی بی مولانا سیدمحمد،سابق وزیرصحت حاجی گلبرخان، صوبائی جنرل سیکریٹری میربہادر ،اپوزیشن لیڈر حاجی شاہ بیگ ،صوبائی ڈپٹی سیکریٹری قاری امتیاز احمد میر،ضلعی امیر منہاج الدین،سابق ضلعی امیر حاجی جمعہ خان، ضلعی سیکریٹری اطلاعات مولانا رحمت اللہ سراجی، تحصیل گلگت کے جنرل سیکریٹری مولاناسعیدالرحمان ، سابق امیدوار حلقہ 2چلاس حاجی پرویز اقبال ،سینئر رہنما بھائی فیروز احمدبسین گلگت،حاجی عبدالصمد تانگیراور ضیاء الرحمان چلاس نے شرکت کی۔اجلاس میں جے یوآئی کی مجلس عاملہ نے گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کی غیر قانونی تبدیلی پر تفصیلی غور وخوض کے بعد اس کو غیر قانونی وغیر اخلاقی قراردیا ۔اجلاس میں صوبائی امیر نے جی بی اسمبلی کی حالیہ پاس کی جانے والی قرارداد کے حوالے سے صوبائی جماعت کی اب تک کی کوششوں پر بریفنگ دی جس پر شرکاء اجلاس نے نہ صرف کی ان کی تائید کی بلکہ ان کی کوششوں کو سراہتے ہوئے جی بی اسمبلی کی عجلت میں اپوزیشن لیڈر کی تبدیلی کیلئے غیر قانونی قرارداد پاس کرنے اور عجلت میں گزٹ آف پاکستان میں شائع کرانے کے خلاف ہر آپشن استعمال کرنے پر غورکرتے ہوئے درج ذیل فیصلے کئے:۔ یہ کہ گلگت بلتستان میں قیام امن اور مذہبی رواداری کے حوالے سے قائد حزب اختلاف حاجی شاہ بیگ کی خدمات قابل تحسین ہیں اورجے یوآئی فرقے کی بنیاد پر کی جانے والی سیاست پر یقین نہیں رکھتی ، اگر ایسا ہوتا تو کروڑوں کی آفر ٹھکراکر جے یوآئی کے ممبر اسمبلی حاجی شاہ بیگ کونسل کے الیکشن میں تحریک اسلامی کے امیدوار کو ووٹ نہ دیتے

۔ یہ کہ جی بی اسمبلی میں بعض ممبران کی طرف سے اپوزیشن لیڈر کو تبدیل کرنے کے حوالے سے کی جانے والی غیر قانونی کوششوں سے علاقے میں موجود مذہبی ہم آہنگی کو سخت دھچکہ لگنے کا خدشہ ہے،جس کی کسی مفاد پرست کو اجازت نہیں دی جاسکتی۔ یہ کہ جی بی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کی تبدیلی کیلئے بنائے جانے والے قانون میں غیر قانونی راستہ اختیار کرتے ہوئے گورنر ،سی ایس اور سیکریٹری قانون کو بائی پاس کرکے عجلت میں گزٹ آف پاکستان میں شائع کرایاگیا،جس کو جے یوآئی کسی صورت تسلیم کرنے کو تیار نہیں۔ یہ کہ سپیکر قانون ساز اسمبلی ایوان میں مذہبی منافرت پھیلارہے ہیں جس کے جے یوآئی کے پاس ٹھوس شواہد موجود ہیں ،ان شواہد کو وقت آنے پر جے یوآئی اسمبلی کے فلور پر پیش بھی کرے گی۔ یہ کہ بعض سیاسی جماعتیں جی بی میں مذہبی سیاسی جماعتوں کو تقسیم کرکے اپنے لئے اقتدارکا راستہ ہموار کرکے اقتدار پرقابض رہنے کی ناکام کوششیں کررہی ہیں جو کسی صورت مذہبی سیاسی جماعتوں کو قابل قبول نہیں۔ یہ کہ جے یوآئی گلگت بلتستان پر کسی بھی قسم کے ٹیکس کے نفاذ کے خلاف ہے اور ہم گلگت بلتستان کی تاجر برادری کے ساتھ مکمل اظہار یکجہتی کرتے ہیں


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved