گلگت بلتستان میں حقوق دینے کیلئے خود نون کی حکومت رکاوٹ بن گئی
  13  فروری‬‮  2018     |     گلگت بلتستان

گلگت (اوصاف نیوز)گلگت بلتستان میں حقوق دینے کیلئے خود نون کی حکومت رکاوٹ بن گئی۔آج دودھ کا دودھ پانی کا پانی ہوا۔آج گلگت بلتستان کو یہ پتا چلا کہ آئینی حقوق میں کون رکاوٹ تھے۔ان خیالات کا اظہار پیپلز پارٹی ضلع دیامر علماء مشائخ کا صدر مولانا پیر محمد نے ایک بیان میں کیا ہے۔انھوں نے کہا کہ حکمران جماعت کے ڈاکٹر اقبال نے آئینی کمیٹی کا پول کھول دیا ہے۔ڈاکٹر اقبال ہمارے لئے مضبوط گواہ بن گیا ہے۔ہم پیپلز پارٹی اور ہمارے قائدین ہمیشہ چیختے ہوئے کہتے تھے کہ آئینی کمیٹی دھوکہ ہے۔آج وزیر ڈاکٹر اقبال نے ثابت کردیا کہ گلگت بلتستان کے عوام کو دوسال سے ٹرخایا جارہا ہے۔

مولاناپیر محمد نے کہا کہ لیگی رہنماؤں نے کبھی سچ نہیں کہا ہے لیکن آج حکمران جماعت کا وزیر نے سچ کہتے ہوئے حقیقت عوام کو بتایا ہے۔انھوں نے مزید کہا ہے کہ ہمارا صدر امجد ایڈوکیٹ ہمیشہ کہتا تھا کہ وفاق سے لیگی حکومت گلگت بلتستان کے عوام کو کبھی بھی حقوق نہیں دیگی۔ واقع آج امجد ایڈوکیٹ کی بات پورا ہوا ہے۔لیگی حکومت نے گلگت بلتستان کے عوام کیساتھ انوکھا ڈرامہ کرکے دو سال ضائع کردیا ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved