تازہ ترین  
جمعہ‬‮   19   اکتوبر‬‮   2018

سرکاری محکموں میں بے قاعدگیوں کی چھان بین جاری،بدعنوانوں کونہیں چھوڑینگے،سکندرعلی


گلگت ( انٹرویو : کرن قاسم ) پبلک اکائونٹس کمیٹی کے چیئرمین کیپٹن( ر) سکندر علی نے کہا ہے کہ کرپشن ناسور بن چکا ہے کرپشن دیمک کی طرح ملک کو چاٹ رہا ہے اس مرض کے خاتمے کے لئے عملی اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے جب تک کرپشن کو جڑ سے اکھاڑ نہیں پھینکا گیا تب تک ملک ترقی کے راہوں پر گامزن نہیں ہوگا ۔ چین آج ترقی کے راہوں پر

گامزن ہے کیونہک وہاں پر کرپشن کی سزا سزائے موت ہے جس کی وجہ سے وہاں پر کوئی کرپشن کرنے کی جرات نہیں کر سکتا اگر پاکستان میں بی کرپشن کرنے والوں کو سخت سزا دی جاتی توآج ہمارا ملک ترقی کیر اہوں پر گامزن ہوتا ۔ ان خیالات کا اظہار کیپٹن(ر) سکندر علی اوصاف کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پبلک اکائونٹس کمیٹی کو فعال بنایا ہے مختلف سرکاری اداروں کے آڈٹ پیرے آئے ہیں جن پر تحقیقات کا عمل جاری ہے انہوں نے کہا کہ سرکاری محکموں میں بے قاعدگیاں او ربد عنوانیوں کی چھان بین جاری ہے کرپشن کرنے والے کو کسی صورت نہیں بخشا جائیگا ، گلگت بلتستان کے تمام سراکریا داروں اور ترقیاتی منصوبوں پر گہری نظر ہے کرپشن کے حوالے سے انکوائری ہو رہی ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت کی تین سالہ کارکردگی تسلی بخش ہے صوبائی حکومت نے گلگت بلتستان کی تعمیر و ترقی کیلے اپنا اہم کردار ادا کیا ہے گلگت بلتستان میں میگا منصوبے ل رہے ہیں ترقیاتی کام تیز رفتار کے ساتھ چل رہے ہیں۔ انہوں نے گندم سبسڈی کے حوالے سے بتایا کہ گلگت بلتستان غریب اور کم وسائل والا صوبہ ہے گندم سبسڈی پر

خاتمہ یہاں کے عوام کا معاشی قتل کے مترادف ہے انہوں نے کہا کہ ایفاد پراجیکٹ ککے ذریعے گلگت لبتستان کے بنجر زمینوں کو آباد کیا جا رہا ہے جب تک ایفاد کا پروجیکٹ کامیاب نہیں ہوگا تب تک گلگت بلتستان میں گندم سبسڈی کی خاتمے کی باتیں بے معنی ہیںَ انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کو چاہئے کہ وہگگت بلتستان کے عوام کو مزید ریلیف دینے کیلئے اقدامات اٹھائے یہاں کے عوام کے معیار زندگی کو بلند کرنے کیلئے عملی اقدامات اٹھائے ۔ گلگت بلتستان میں حالیہ دہشت گردی کے واقع۴ات کے حوالے سے انہوں نے بتایا کہ گلگت بلتستان پر امن خطہ ہے بد قسمتی سے مٹھی بھر شرپسند عناصر یہاں کے امن کو خراب کرنے کی ناکام کوشش کررہے ہیں، ضلع دیامر میں پولیس نوجوانوں پر قاتلانہ حملہا ور چلاس میں سکولوں کو بم سے اڑانا اور کارگاہ نالہ میں دہشت گردی کا واقعہ قابل افسوس ہے ۔ لیکن صوبائی حکومت نے سیکورٹی فورسز کے تعاون سے مٹھی بھر شرپسند عناصر کو کچل کر رکھ دیا ہے اور اب گلگت بلتستان کے عوام با شعور ہو چکے ہیں یہاں کے امن کو خراب کرنے والوں کے ساتھ آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائیگا

 




 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں


آج کا مکمل اخبار پڑھیں

تازہ ترین خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved