08:58 am
60سالوں کے انتظار کے بعد 74سال کی عمر میں خاتون کے ہاں کتنے بچوں کی پیدائش ہو گئی ؟ دنیا ششدر رہ گئی

60سالوں کے انتظار کے بعد 74سال کی عمر میں خاتون کے ہاں کتنے بچوں کی پیدائش ہو گئی ؟ دنیا ششدر رہ گئی

08:58 am

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)یہ معجزوں کی دنیا ہے اس کائنات کا خالق کچھ بھی کرنے پر قدرت رکھتا ہے لہٰذا اولاد کے معاملے میں بھی وہ جب جس کو چاہے نواز دیتا ہے۔قدرت کا ایک ایسا ہی معجزہ ہمارے پڑوسی ملک انڈیا میں پیش آیا ہے جہاں دنیا کی معمر ترین خاتون نے جڑواں بچیوں کو جنم دیا ہے۔عام طور پر تصور کیا جاتا ہے کہ 40 سال کے بعد خواتین کے لیے ماں بننے کا امکان کم ہوجاتا ہے مگر ایک 74 سالہ خاتون نے جڑواں بچوں کو جنم دے کر سب کو دنگ کردیا۔ بھارت سے تعلق رکھنے والی ارامتی مانگیاما نے آئی وی ایف طریقہ علاج کی مدد سے 74 سال کی عمر میں صحت مند جڑواں لڑکیوں کو جنم دیا
اور اس طرح ممکنہ طور پر اس عمر میں جنم دینے والی سب سے معمر ماں بھی بن گئیں۔آندھرا پردیش سے تعلق رکھنے والی خاتون کی عمرکی فی الحال سرکاری تصدیق نہیں ہوئی،تاہم اگر ان کا دعویٰ درست ثابت ہوا تو وہ موجودہ ریکارڈ ہولڈر خاتون ماریہ ڈیل کارمین سے 8 سال بڑی ہوں گی۔ اس خاتون کی پہلے کوئی اولاد نہیں تھی اور وہ ہمیشہ سے بچوں کو چاہتی تھیں۔ان کے بقول 'میں الفاظ میں اپنے جذبات کا اظہار نہیں کرسکتی، ان بچیوں نے مجھے مکمل کردیا، میرا 60 برسوں کا انتظار ختم ہوا اور اب مجھے کوئی مزید بانجھ نہیں کہہ سکے گا'۔انہوں نے بتایا 'مجھے آئی وی ایف سے مدد لینے کا خیال اس وقت آیا جب میری ایک پڑوسن 55 سال کی عمر میں حاملہ ہوئی'۔ اس وقت سب سے زیادہ معمر ماں بننے کا ریکارڈ رکھنے والی خاتون نے 2006 میں 66 سال اور 358 دن کی عمر میں جڑواں بیٹوں کو جنم دیا تھا۔آئی وی ایف طریقہ علاج میں مدد دینے والے ڈاکٹروں کے مطابق جب خاتون نے گزشتہ سال نومبر میں ان سے رابطہ کیا تو وہ ان کی عمر دیکھ کر حیران رہ گئے، مگر پھر اسے ایک چیلنج کے طور پر لیا۔بچیوں کی پیدائش کا بیشتر خرچہ بھی اسی آئی وی ایف کلینک نے اٹھایا۔