02:23 pm
جاپانی کمپنی ایسکس کے سٹورکے باہرلگی تشہیری اسکرین پرفحش ویڈیوز دیکھ کرلوگ حیران

جاپانی کمپنی ایسکس کے سٹورکے باہرلگی تشہیری اسکرین پرفحش ویڈیوز دیکھ کرلوگ حیران

02:23 pm

آکلینڈ (ویب ڈیسک )نیوزی لینڈ کے سب سے بڑے شہرآکلینڈ میں اسپورٹس مصنوعات بنانے والی جاپانی کمپنی ایسکس کے سٹورکے باہرلگی تشہیری اسکرین پرکم سے کم 8گھنٹوں تک پورن ویڈیوز دیکھ کرلوگ حیران رہ گئے ،مذکورہ سٹورآکلینڈ کی شارٹ لینڈ اسٹریٹ میں واقع ہے جس کاشمارپوش علاقوں میں ہوتاہے ،سٹورکے باہرلگی بڑی تشہیرایل سی ڈی اسکرین پر29ستمبرکی صبح کواچانک پورن ویڈیوز چلناشروع ہوئیں ،اس وقت سٹوربندتھا علاوہ ازیں مارکیٹ کی بیشتر دکانیں بھی بند تھیں۔
ایسکس شوز، ٹراؤزر، شرٹس اور زیر جامہ سمیت دیگر اسپورٹس مصنوعات تیار کرتی ہے—فوٹو: ایسکس فیس بک’نیوزی لینڈ ہیرالڈ‘ کے مطابق ’ایسکس‘ اسٹور کے باہر نصب اسکرین پر تقریباً رات ایک بجے کے بعد پورن ویڈیوز چلنا شروع ہوئیں جو صبح 10 بجے تک نشر ہوتی رہیں۔مارکیٹ میں کھلے عام لگی اسکرین پر پورن ویڈیوز دیکھ کر وہاں سے گزرنے والے عام افراد حیران رہ گئے، تاہم بعض لوگ ان ویڈیوز کو دیکھنے کے لیے وہاں کھڑے رہے۔اسکرین پر چلنے والی ویڈیوز کو دیکھنے والے افراد میں کم عمر بچے، نوجوان اور خواتین بھی شامل تھیں۔رپورٹ کے مطابق اسکرین پر چلتی رہنے والی پورن ویڈیوز کو صبح اس وقت بند کیا گیا جب اسپورٹس کمپنی کے اسٹور ملازمین وہاں پہنچے۔اسٹور عہدیداروں نے ابتدائی طور پر بتایا کہ ان کے کمپیوٹر سسٹم کو ہیک کرکے نامناسب ویڈیوز چلائی گئیں۔کمپنی نے لوگوں سے اسکرین پر پورن ویڈیوز نشر ہونے پر معذرت کرتے ہوئے کہا کہ کمپیوٹر سسٹم کے ہیک کیے جانے کی تفتیش کی جا رہی ہے۔ کمپنی اور اسٹور عہدیداروں کے مطابق ان کے سسٹم کو اس وقت ہیک کیا گیا جب وہ دکان بند کرکے جا چکے تھے۔واضح رہے کہ ’ایسکسس‘ جاپان کی ملٹی نیشنل اسپورٹس مصنوعات تیار کرنے والی کمپنی ہے، یہ کمپنی خاص طور پر ’شوز، شرٹ اور اسپورٹس زیر جامہ‘ تیار کرتی ہے

تازہ ترین خبریں