ظالم بادشاہ کی عیاشیاں ،کنواری لڑکیاںبھی رو پڑیں،شرمناک اقدام نے ملک بھر میں غصے کی لہردوڑ گئی
  13  ‬‮نومبر‬‮  2017     |     دلچسپ و عجیب

لوبامبا ( نیوز ڈیسک ) سوازی لینڈ کا شمار دنیا کے غریب ترین ممالک میں ہوتا ہے لیکن یہاں کے بادشاہ کے شوق بہت ہی نرالے اور شرمناک ہیں۔ہر سال ملک کی حسین ترین نو عمر لڑکیاں بادشاہ مسواتی سوئم کے سامنے برہنہ رقص کرتی ہیںاور یہ ان میں سے حسین ترین لڑکی کو اپنی دلہن منتخب کرتا ہے۔اب عیاش حکمران کے سر پر جنون سوار ہو گیا ہے

کہ ملک کی تمام نوعمر لڑکیاں کنواری رہیں تاکہ وہ جس کا بھی انتخاب کرے وہ کنواری ہو اور اس کے بدلے تمام کنواری لڑکیوں کو ماہانہ 11 پاونڈ (تقریبا 1800 پاکستانی روپے) وظیفہ بھی دیا جائے گا۔ملک بھر کی لڑکیاں اس فیصلے پر غم و الم کی تصویر بن گئی ہیں کیونکہ انہیں بادشاہ کی عیاشی کے لیے اپنی مرضی کی شادی سے محروم رہنا پڑے گاتاکہ وہ جب بھی اس کے سامنے پیش ہوں تو کنواری ہوں۔ہوس پرست بادشاہ نے اپنی عیاشی کے منصوبے کو ملک میں تیزی سے پھیلتی ایڈز کی بیماری کو روکنے کا اقدام قرار دے دیا ہے ۔اس کا کہنا ہے کہ لڑکیاں جنسی فعل سے محفوظ رہیں گی تو ایڈز نہیں پھیلے گا۔جبکہ اصل منصوبہ اپنی شیطانی خواہشات کی تکمیل کے لیے کنواری لڑکیوں کی دستیابی یقینی بنانا ہے۔ہر سال نئی دلہن کا انتخاب کرنے والا یہ عیاش حکمران اب تک 15 نو عمر دلہنیں منتخب کر چکا ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
5%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
5%
پسند ںہیں آئی
91%


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دلچسپ و عجیب

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved