ساڑھے چھ کروڑ سال پرانے کچھوے کی باقیات میکسیکو میں دریافت
  4  دسمبر‬‮  2017     |     دلچسپ و عجیب

میکسیکو (نیوز ڈیسک )دس سینٹی میٹر لمبے اس کچھوے کا خول انتہائی سخت تھا ، اس سے وہ مادہ نکلتا تھا جس کی وجہ سے دوسرے جانور اس سے دور رہتے تھے ساڑھے چھ کروڑ سال پہلے پائے جانے والے کچھوے کی باقیات میکسیکو میں دریافت ہوئی ہیں۔ دیو قامت جانوروں کے دور میں پایا جانے والا یہ سب سے چھوٹا جانور تھا

جس کی لمبائی صرف دس سینٹی میٹر تھی۔ کچھوے کی باقیات میکسیکو، کینیڈا اور امریکا کے ماہرین نے شہر سالٹیلو میں ایک پریس کانفرنس میں دکھائی۔ ان کا کہنا ہے اس کا خول بہت سخت ہے اور اس سے ایسا بدبو دار مادہ نکلتا تھا جس سے بڑے جانور اس سے دور رہتے ہوں گے۔ سالٹیلو کا علاقہ اب صحرا پر مشتمل ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے اس دریافت سے اس بات کا پتہ چلتا ہے کہ کروڑوں سال پہلے یہ علاقہ ہرا بھرا ہو گا جہاں پانی کی بہتات ہو گی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دلچسپ و عجیب

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved