02:44 pm
میری بہن مرگئی لیکن کوئی دفنانے کو تیار نہیں‘اطالوی شہری

میری بہن مرگئی لیکن کوئی دفنانے کو تیار نہیں‘اطالوی شہری

02:44 pm

روم(نیوز ڈیسک) چین کے شہر وہان سے شروع ہونے والے کرونا وائرس نے اب اپنے قدم دنیا بھر میں جما لئے ہیں جس کے بعد ہر طرف اس کی تباہی سے خوف پھیل گیا ہے۔اٹلی میں بھی کرونا وائر س کی تباہی شروع ہو چکی ہے جس کے بعد ابھی تک اٹلی میں 1 ہزار سے زیادہ افراد کرونا وائرس کا نشانہ بن کر جاں بحق ہو گئے ہیں۔اسی دوران ایک اطالوی شہری کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے
جس میں اس نے عوام سے اپیل کی ہے وہ حکومت سے اس کی بہن کی لاش اٹھانے کا مطالبہ کریں۔ویڈیو میں اس کا کہنا تھا کہ میری بہن کرونا وائرس کا شکار ہو گئی تھی اور جان کی بازی ہار گئی ہیں لیکن ابھی تک کسی نے میری اس کی لاش اٹھانے میں مدد نہیں کی، لوگ خوف میں مبتلا ہیں جس کے بعد کوئی بھی میری مدد کے لئے نہیں آرہا۔شہری نے بات کرتے ہوئے بتایا ہے کہ اٹلی میں کرونا وائرا س کا خوف اس حد تک پھیل گیا ہے جس کے بعد نا چاہتے ہوئے بھی ہمارے دوست، رشتہ دار اور پولیس اہلکار بھی ہمارے مدد کرنے کو تیار نہیں ہیں۔اس بارے میں غیر ملکی خبررساں ادارے نے بتایا ہے کہ 36 گھنٹے گزرنے کے بعد رشتہ داروں نے لاش کو اٹھایااور آخری رسومات ادا کئے بغیر ہی لڑکی لاش کو دفنا دیا گیا ہے۔ ۔چین کے شہروہان سے شروع ہونے والے کرونا وائرس نے اب دنیا بھر میں قدم جما لئے ہیں جس کے بعد اس سے متاثر افراد کی تعداد 1 لاکھ 30 ہزار سے زیادہ ہو گئی ہے جبکہ اس سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 5 ہزا ر تک پہنچ گئی ہے۔ علمی ادارہ صحت نے بھی کرونا وائرس کو ایک عالمی وبا قرار دے دیا ہے جس کے بعد ہر ملک کو ایمرجنسی نافذ کرنے کا کہا گیا ہے۔ اٹلی میں بھی کرونا وائرس نے تباہی مچائی ہوئی ہے جس کے بعد ابھی تک 1 ہزار سے زیادہ افراد کرونا وائرس کی وجہ سے ہلاک ہو چکے ہیں۔