06:44 am
سابق ملائیشوی وزیر اعظم نے یواے ای کے ولی عہد سے مدد کی اپیل کرڈالی

سابق ملائیشوی وزیر اعظم نے یواے ای کے ولی عہد سے مدد کی اپیل کرڈالی

06:44 am

کوالالمپور (مانیٹرنگ ڈیسک) کرپشن کے جرم میں عدالت سے 12سال قید اور 39ملین پائونڈز کی سزا پانے والے ملائیشیا کے سابق وزیراعظم نجیب رزاق نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد محمد بن زید النہیان سے مدد کی اپیل کر ڈالی ہے۔ وائرل ہوتی ہوئی ایک ویڈیو میں نجیب رزاق کی محمد بن زید النہیان سے ٹیلی فونک گفتگو سنی گئی ہے جس میں نجیب رزاق نے یواے ای کے ولی عہد سے درخواست کی ہے کہ اپنے بیٹے رضا کی مدد کے لیے کروڑوں ڈالرز کی ٹرانزیکشن کرنے کی درخواست کرتے ہیں۔ یہ آڈیو کال ملائیشین انسداد بدعنوانی سیل کی جانب سے جاری کی گئی۔ اس فون کال کے دوران نجیب رزاق ابوظہبی کے ولی عہد محمد بن زید سے ذاتی حیثیت میں مدد طلب کرتے ہیں
جبکہ محمد بن زید النہیان ان سے خاندان سے متعلق پوچھتے ہیں جس پر نجیب رزاق کہتے ہیں کہ باقی تو سب ٹھیک ہے مگر یہ سکینڈل ان کی ساکھ خراب کر رہا ہے۔ نجیب رزاق کرپشن اور چوری کے42 مقدمات میں ملوث پائے گئے ہیں جن میں4 بلین ڈالرز کی چوری کی گئی ہے۔ جو کہ ملائیشیا کے سرکاری خزانے سے چوری کیے گئے۔ ملائیشین ڈویلپمنٹ برہد ون نامی سکینڈل میں نجیب رزاق کے سوتیلے بیٹے رضا عزیز کی پروڈکشن کمپنی(ریڈ گرینائٹ پکچرز) کے ذریعے کروڑوں روپے ملک سے باہر منی لانڈرنگ کے ذریعے بھیجے جانے کا الزام ہے۔ اس فون کال کے دوران نجیب رزاق محمد بن زید سے جھوٹی ادائیگیوں کی ٹرانزیکشن کے لیے کہتے ہیں اور ابوظہبی کی پٹرولیم کمپنی کے اکاؤنٹ سے ٹرانزیکشن کا مشورہ دیتے ہیں

تازہ ترین خبریں