10:45 am
 ہندوستانی مظالم کو روکنے کیلئے مشترکہ جدوجہد کرنی ہو گی،عبدالوحید

ہندوستانی مظالم کو روکنے کیلئے مشترکہ جدوجہد کرنی ہو گی،عبدالوحید

10:45 am

ہندوستانی مظالم کو روکنے کیلئے مشترکہ جدوجہد کرنی ہو گی،عبدالوحید مقبوضہ کشمیر میں رائے شماری کرا واکر کشمیریوں کے فیصلے کو تسلیم کیا جائے میرپور(نمائندہ اوصاف ) ریاست جموں کشمیر ایک اکائی ہے اس کو مختلف یونٹس میں تقسیم کر کے ہندوستان اور پاکستان میں ضم کرنا یو این او میں تسلیم شدہ کشمیری قوم کے حق خود ارادیت کی نفی اور جارحیت کے زمرہ میں آ تا ہے،یو این او کے زیر انتظام رائے شماری کرا واکر کشمیری باشندوں کے فیصلہ کو تسلیم کیا جائے، ہندوستان کی اس جارحیت کے خلاف کشمیری عوام کا احتجاج اور اس حتجاج کو روکنے کے لئے پورا جنگی ساز وسامان ،اسلحہ اور بارود کا استعمال یو این چارٹر کے منافی ہے ہندوستان کے ان جارحانہ اقدامات کو روکنے کے لئے اور رائے شماری کے حصول کے لئے پوری قوم کو آر پار مشترکہ جدوجہد کرنی چاہیئے ان خیالات کا اظہارجموں کشمیر محاذ رائے شماری کے مرکزی صدر سید عبدالوحید بخاری، ایم ایس مرزا، عبدالشکور قریشی ، رزاق عاصی ، امین انصاری،ساجد رحمٰن،الیاس قریشی، حارث اشفاق،ابرار بیگ، چوہدری بنارس،اسحٰق جنجوعہ،عظیم دت،فرحت انصاری، شبیر جنجوعہ،بشارت زرگر،چوہدری فیاض، جاوید اقبال،شفیق انصاری،ملک عبدالمجید، غلام مصطفیٰ اور محمد اسد نے کیا ،انہوں نے کہا کہ آزادی کی تحریکیں قابضوں کی فنڈنگ سے نہیں چلتیں بلکہ اس کے لئے قوم کو کو نظریاتی طور پر تیار کرناپڑتاہے ، نہ ہی ایسی تحریکیں مذہبی منافرت پر چلتی ہیں، ریاست میں بسنے والے تمام مذاہب کے لوگ باشندہ ریاست درجہ اول ہیں جو ایک قوم کے برابر حقوق رکھنے والے باشندے ہیں، 1988 کی تحریک مقبول بٹ شہید کے نظریات کے منافی شروع کی گئی تھی جو اب ناکام ہو چکی ہے ۔