حویلی،ن لیگ ہتھلانجہ سے 74 افراد نے جماعت کو خیر آباد کہہ دیا
  17  جولائی  2018     |      کشمیر

حویلی کہوٹہ (ڈسٹرکٹ رپورٹر) ن لیگ حویلی کے گاؤں ہتھلانجہ سے سرکردہ 74 افراد نے ن لیگ کو خیر آباد کہہ دیا اس گاؤں کے معتبر سیاسی افراد زیر قیادت چودھری محمد الطاف کہوٹہ پہنچے اور نمائندگان پریس کے سامنے جماعت کو خیر آباد کہنے کی وجوہات اور تاثرات بیان کرتے ہوئے کہا کہ ہم گذشتہ چالیس برس سے محمد عزیز چودھری وزیر تعمیرات و مواصلات کے ساتھ رہے اور اس سلسلہ میں کسی قسم کی قربانی سے گریز نہیں کیا اور ہمیشہ صف اول میں رہے ۔ ہم نے یہ نہیں دیکھا کہ جماعت کونسی ہے بس چودھری محمد عزیز کا ساتھ دیا اور چودھری محمد عزیز نے ہمیشہ ہم سے برادری ازم کی بنیاد ووٹ لیئے اور پورئے گاؤں کے ہزاروں افراد نے چودھر ی محمد عزیز کے ہاتھ مضبوط کیے اور ان کے مخالف امیدوار کا بیلٹ بکس اس سٹیشن سے ہمیشہ خالی ہوتا رہا ۔مخالفین کو تو پولینگ ایجنٹ تک میسر مہیا نہیں ہونے دیا اور یہ سلسلہ چالیس سال پر محیط ہے ۔ چودھری محمد عزیز مسلم کانفرنس میں رہے تو ہم ساتھ رہے وہ ن لیگ میں آئے تب ہم ساتھ رہے ان کی جماعتوں میں چھلانگوں کا بھی ہم نے کبھی نوٹس نہیں لیا اور متعدد بار اقتدار کے ایونوں تک پہنچایا اور ہر بار ہمارئے گاؤں کو لالی پاپ کے سوا کچھ نہیں ملا یوں چالیس برس انسان کی زندگی اگر ضائع ہوگے تو باقی کیا بچا؟ ہم خود تو برباد ہو ئے لیکن اپنے آنے والی نسلوں کو برادری ازم کی بھینٹ نہیں چڑھنے دیں گے اور ان کی ترقی اور خوشحالی کیلئے ہم سے جوبھی بن پڑا ضرور کریں گے۔ بیتے چالیس برسوں میں ہمارئے گاؤں میں کوئی بھی ترقیاتی کام نہیں ہوا بلکہ یہاں تک کہ کسی بھی شخص کو ادنیٰ ملازمت بھی نہیں دلوائی گئی اب تو ان کے فرزند ارجمند بھی الیکشن میں حصہ لینے کے پر تول رہے ہیں ۔ ہم نے فیصلہ کر لیا ہے کہ اب برادری ازم کی سیاست کے خول کو توڑ کر اپنے گاؤں کے مفادات اور علاقے کے مجموعی مفادات کو مد نظر رکھیں گے اور کسی بھی جھانسے میں نہیں آئیں گے انہوں نے کہا کہ ہم نے بہت صبر کیا ہمارا صبر طویل سے طویل ہوتا جارہا تھا یوں اب مزید وقت ضائع کیئے بغیر آج جب وزیر تعمیرات اپنے اقتدار کے جوبن پر ہیں جب ہم ان کا ساتھ چھوڑنے کا اعلان کر رہے ہیں اس موقع پر چودھری بدالدین اور چودھری محمد امین نے اس موقف کی بھر پور تائید کی ۔ انہوں نے مزید کہا کہ چند روز تک ہم ایک پر ہجوم پریس کانفرنس بھی کریں گے جس میں مزید اہم اعلانات بھی کریں گے ۔ اگر زندہ رہے تو ہمارئے پولنگ سٹیشن سے محمد عزیز یا ان کے حمائت یافتہ اور مراعات یافتہ شخص کا بیلٹ بکس خالی نکلے گا اور کوشش ہوگی کہ ہمارئے پورئے سٹیشن سے انہیں پولنگ ایجنٹ ہی میسر نہ آئے ۔ وفد میں چودھری متین ، چودھری محمد عارف، چودھری محمد مشتاق، چودھری غلام محمد،چودھری محمد صغیر ، چودھری لعل دین ،چودھری کمال دین،چودھری محمد آصف ، چودھری اکبر دین ، چودھری محمد لطیف ،چودھری محمد بشیر ، چودھری محمد ساجد،چودھری محمد رشید ، چودھری محمد نصیر ،

صوبیدار(ر) چودھری محمد شبیر ، چودھری محمد بشیر ، چودھری محمد کفیل، چودھری شاہ محمد ولد بگا، چودھری محمد شوکت، چودھری محمد جاوید ، چودھری بدالدین ، چودھری شمس الدین، چودھری ارشد ، چودھری محمد شریف ، چودھری محمد طارق ، چودھری محمد مشتاق، چودھری وزیر محمد ، چودھری فرید، چودھری غلام حسین اور فرعان شریف کے علاوہ وفد میں آئے ہوئے دیگر متعدد افراد نے اپنے انہی خیالات اظہار کیا اور مزید کہا کہ اگلا سیاسی فیصلہ سوچ سمجھ کر باہمی مشاورت سے کریں گے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved