08:59 am
 باغ کے حقیقی باغبان  قمر الزمان اور ضیا ء القمر ہیں، اعجاز بیگ

باغ کے حقیقی باغبان قمر الزمان اور ضیا ء القمر ہیں، اعجاز بیگ

08:59 am

باغ کے حقیقی باغبان قمر الزمان اور ضیا ء القمر ہیں، اعجاز بیگ الیکشن میں بلند دعوے کرنے والے عوام سے منہ چھپاتے پھر رہے ہیں نعمانپورہ (نمائندہ اوصاف )پاکستان پیپلز پارٹی تحصیل باغ کے صدر سردار اعجاز بیگ نے کہا ہے کہ باغ کے تینوں ایم ایل اے بے بسی کی تصویر بنے ہوئے ہیں ۔ الیکشن میں بلند و بانگ دعوے کرنے والے اب عوام سے منہ چھپاتے پھر رہے ہیں ۔باغ میں اس وقت تک 2وزیر اور ایک ایم ایل اے ہونے کے باجودکوئی میگا پراجیکٹ نہیں آسکا یہ ان کی نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ باغ کا حقیقی باغبان سردار قمر الزمان اور سردار ضیا ء القمر ہیں ۔ سردار قمر الزمان نے اپنے دور حکومت میں باغ کے لیے متعدد میگا پراجیکٹ لائے اور باغ کے عوام کا حقیقی لیڈر ہونے کا ثبوت دیا مگر دوران الیکشن کوئی وزیر اعظم کا جھانسہ دیتا رہا اور کوئی موٹروے بنانے کے دعوے کر کے عوام کو ورغلاء کر ووٹ خریدے اور آج نہ کوئی وزیر اعظم بنا اور نہ موٹرے بنی اور نہ ہی کوئی ہسپتال بنا۔ عوام کو ایئر ایمبولینس کے خواب بھی دیکھائے گئے مگرابھی تک ہسپتال کے لیے ایک ایمولینس مہیا نہیں کر سکے ۔ یہ ان کی اوقات ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کر تے ہوئے کیا۔ ان کے ہمراہ انچارج پیپلز سیکرٹریٹ باغ سردار ضمیر گردیزی ، سردار شجاع بیگ ، سابق ایڈمنسٹریٹر میونسپل کارپوریشن سید نسیم گردیزی ،سردار مسعود بیگ ، سردار لعل خان ،سردار تنویر رشید ، سردار پرویز چغتائی ،سابق صدر پی ایس ایس ضلع باغ سردار خالد مغل ودیگر بھی موجود تھے ۔ سردار اعجاز بیگ نے کہا کہ باغ اس وقت انتہائی نالائق وزراء کے ہاتھوں میں ہے ۔ سردار قمر الزمان کے دور حکومت میں جو کچھ باغ لایا گیا جو باغ کے لوگوں کا اثاثہ ہے یہ لوگ ان کی حفاظت نہیں کر سکتے ۔باغ کے عوام اب سوچنے پر مجبور ہو چکی ہے کہ ان سے کیسے جان چھڑائی جائے ۔ انہوں نے کہا کہ وویمن یونیورسٹی قمر الزمان خان کا ایک اہم کارنامہ ہے جسے باغ کی عوام کبھی فراموش نہیں کر سکتی مگر یہ وزراء اسے بھی باغ سے باہر منتقل کرنے کی سازش میں ملوث ہیں ۔ اگر انہوں نے ایسا کیا تو باغ کے عوام ان کو کبھی معاف نہیں کرے گی اور ضلع باغ کے حدود میں ان کا داخلہ بند کر دیا جائے گا۔ باغ میں سڑکوں کی حالت انتہائی خراب ہو چکی ۔ باغ پل ، قندیل چوک میں سڑکوں پر دو دو فٹ کے کھڈے پڑے ہوئے ہیں ان میں اتنی اہلیت نہیں ہے کہ کم از کم وہ ہی درست کروا لیں ۔ باغ کے تمام محکمے دونوں وزاء سے باغی ہو چکے ہیں ۔ کوئی ان کی بات تک سنا گوار نہیں کر رہاورنہ باغ کے حالات آج ایسے نہ ہوتے ۔

تازہ ترین خبریں