11:55 am
 حکومت ہند اور قابض بھارتی افواج کی مقبوضہ جموں کشمیر میں منصوبہ بند جارحیت کیخلاف پاسبان حریت جموں کشمیر کا شدید احتجاج

حکومت ہند اور قابض بھارتی افواج کی مقبوضہ جموں کشمیر میں منصوبہ بند جارحیت کیخلاف پاسبان حریت جموں کشمیر کا شدید احتجاج

11:55 am

مظفرآباد (نمائندہ خصوصی) حکومت ہند اور قابض بھارتی افواج کی مقبوضہ جموں کشمیر میں منصوبہ بند جارحیت کیخلاف پاسبان حریت جموں کشمیر کا شدید احتجاج۔تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی ریاستی دہشتگردی، نوجوانوں کے قتل عام، رہائیشی مکانات کو جلائے جانے اور کشمیری قیدیوں کی ہندوستان کی جیلوں میں بگڑتی صورت حال پر تشویش کو لے کر پاسبان حریت جموں کشمیر کا حکومت ہند اور قابض بھارتی افواج کیخلاف احتجاجی دھرنے اور ریلی کا انعقاد کیا گیا۔پاسبان حریت جموں کشمیر کے زیراہتمام برہان وانی شہید چوک میں سینکڑوں افراد نے بھارت کیخلاف احتجاجی دھرنے میں شرکت کی، مظاہرین نے آزادء جموں کشمیرکے حق میں اور بھارتی ظلم تشدد کیخلاف فلک شگاف نعرے بازی کی، شرکاء نے ہاتھوں میں درجنوں پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے
جن پر اقوام متحدہ سے مدد کی اپیل، شھدآء کو خراج عقیدت اور کشمیری اسیران کے حق میں تہنیتی جملے درج تھے، کتبوں پر بھارتی قابض افواج اور حکومت کی کشمیرمیں تشدد کی پالیسی کیخلاف مزمتی جملے درج تھے، احتجاجی دھرنے کی قیادت پاسبان حریت جموں کشمیر کے چیئرمین عزیراحمدغزالی، انٹرنیشنل فورم فار جسٹس کے وائیس چیئرمین مشتاق السلام، حزب المجاہدین جموں کشمیر کے کمانڈر آصف مخدومی، پیپلزپارٹی کے راہنما شوکت جاوید میر، معروف عالم دین مولاناعبدالعزیزعلوی، مہاجرین راہنماؤں چوہدری محمد اسماعیل، حمزہ شاہین، محمداسماعیل میر، پاسبان حریت کے راہنما عثمان علی ہاشم نے کی، احتجاجی دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے عزیراحمدغزالی نے کہا کے کشمیر میں بھارتی قابض افواج کے ہاتھوں انسانیت کا قتل عام بالخصوص نوجوانوں کو چن چن کے شہید کیئے جانے پر اقوام متحدہ اور عالمی اداروں کی مجرمانہ خاموشی کشمیری عوام کیلیئے بہت ہی غمناک اور تشویش کا باعث ہے، ان کا کہنا تھا کے بھارتی حکومت اور افواج منصوبہ بند طریقے سے جموں کشمیر کی بربادی پر عمل پیرا ہیں، گھروں کو بارود سے برباد کیا جارہا ہے کشمیری آزادی پسند قیادت کو جیلوں میں ٹھونسا جارہا ہے، کشمیری قیدیوں کو بھارتی جیلوں میں تشدد، مارپیٹ اور بنیادی انسانی حقوق سے محروم رکھا جانا حقوق البشر کیعالمی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے انھوں اقوام متحدہ سے جموں کشمیر کے حق میں آواز بلند کرنے کا مطالبہ کیا، دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے مشتاق السلام نے کہا کے گزشتہ اکہتر برسوں سے کشمیر میں آگ اور خون کا کھیل جاری ہے بھارتی ظلم، تشدد اور بربریت جاری ہے ان حالات میں دنیا کی خاموشی کشمیری عوام کیلیئے بہت ہی تکلیف دہ ہے، انھوں نے دنیا سے کشمیر کی بگڑتی صورت حال پر نوٹس لینے کا مطالبہ کیا، محمدآصف مخدومی نے کشمیر میں جاری سچ اور جھوٹ کی لڑائی میں کشمیری نوجوانوں کو سچ اور آزادی کے علمبردار قرار دیتے ہوئے کہا کے کشمیری نوجوانوں کی عظیم، انتھک جدوجہد نے بھارت کو دنیا کے سامنے بے نقاب کردیا ہے ان کا کہنا تھا کے ہم تھوڑے اور قلیل ہی صحیح لیکن بھارت کو یہ جان لینا چاہئیے کہ یہ جنگ کشمیر ہی جیتے گا اور اس بے رحم جنگ میں شکست بھارت کامقدر ہوگی، مظاہرے سے شوکت جاوید میر، مولاناعبدالعزیزعلوی، عثمان علی ہاشم، شہباز احمد مشعل، محفوظ انقلابی اور تنظیر اقبال نے خطاب کیا، دھرنے میں شریک مظاہرین نے برہان وانج شہید چوک سے گھڑی پن کی طرف مارچ کیا۔

تازہ ترین خبریں