08:42 am
متوقع مون سون بارشون سے سیلاب کا خطرہ ، ڈپٹی کمشنر سردار عدنان خورشید کان

متوقع مون سون بارشون سے سیلاب کا خطرہ ، ڈپٹی کمشنر سردار عدنان خورشید کان

08:42 am

میرپور(بیورورپورٹ) ڈپٹی کمشنر سردار عدنان خورشید خان نے کہاہے کہ متوقع مون سون بارشوں کی وجہ سے سیلاب کے خطرات اور ایمرجنسی سے نمٹنے کیلئے ضلع میرپور کے جملہ سرکاری محکمہ جات کے ساتھ ساتھ این جی اوز، کنٹریکٹرزاور سول سوسائٹی سمیت مقامی افراد سے بھی خدمات حاصل کی جائیں گی۔کسی بھی ایمرجنسی کی صورت میں تمام سرکاری ملازمین 24 گھنٹے حاضر رہیں گے اور تمام محکموں کی سرکاری گاڑیاں ورکنگ حالت میں رکھی جائیں تاکہ ایمرجنسی کی صورت میں ریسکیو اور امدادی کاموں میں کوئی مسئلہ پیدا نہ ہوسکے۔قدرتی آفات کواگرچہ روکانہیں جاسکتالیکن بہترحکمت عملی اورپیش بندی کے باعث اس کے نقصانات کوکم کیاجاسکتاہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈسٹرکٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے زیر اہتمام متوقع مون سون
بارشوں اور سیلاب کے دوران لوگوں کو محفوظ مقامات پر لے جانے اور ضلعی انتظامیہ کو ہائی الرٹ کرنے کے سلسلہ میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں ایس پی راجہ اظہر اقبال،ڈی ایچ او ڈاکٹر فدا حسین،اسسٹنٹ کمشنر یاسر ریاض،اسسٹنٹ کمشنر ڈڈیال حسن اقبال،ڈسٹرکٹ انفارمیشن آفیسر محمد جاوید ملک ،ڈی ای او نسواں رخسانہ مجاہد،ڈی ای او مردانہ راجہ بشارت اقبال،اسسٹنٹ ڈائریکٹر ریسکیو 1122محمد آصف،اسسٹنٹ ڈائریکٹر شہری دفاع راجہ محمد اشتیاق،ایس ڈی او برقیات شوکت سرفراز عباسی،ایکسین بلدیہ امتیاز علی،ایس ڈی او پبلک ہیلتھ انجینئرنگ عمر دراز،ڈپٹی چیف آفیسرضلع کونسل چوہدری خادم حسین،سب انجینئر برقیات عامر عزیزکے علاوہ دیگر افسران نے شرکت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ مون سون بارشوں کی وجہ سے متوقع سیلاب کے دوران ضلع میرپورمیں کسی بھی ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کے لئے پیش بندی کے لیے لائحہ عمل اختیارکرنے کے حوالے سے مختلف تجاویز دی گئیں۔اجلاس میں فیصلہ کیاگیاکہ مون سون بارشوں کے دوران دریائے جہلم،نیلم اور پونچھ سے منگلا ڈیم میں آنے والے پانی کی صورتحال سے آگاہی حاصل کی جائے اور ڈیم میں پانی کی گنجائش کی مانیٹرنگ اورمنگلاڈیم میں پانی کے لیول کی معلومات واپڈا سے روزانہ کی بنیاد پرحاصل کی جائیں۔ ڈیم میں پانی کی صورتحال کی باقاعدہ مانیٹرنگ کے ساتھ ساتھ سیلاب آنے کی صورت میں دریائے جہلم اورنہراپرجہلم کے کنارے متوقع متاثرہ آبادیوںکو صورتحال سے آگاہ رکھاجائے اور کسی بھی ہنگامی صورتحال میں انھیں محفوظ مقام پرپہنچانے کے انتظامات کے بارے میں بھی آگاہ رکھاجائے۔اجلاس میں فیصلہ کیاگیاکہ ریسکیو1122 ،شہری دفاع ، محکمہ صحت عامہ، برقیات، بلدیہ، ضلع کونسل سمیت دیگرتمام ادارے ایمرجنسی کی حالت میں اپنے سٹاف ،وہیکلز، ایکویپمنٹ سمیت امدادی کاموں میں بھرپورشرکت کریں گے جبکہ سول سوسائٹی کوبھی امدادی کاموں میں شامل ہونے سمیت متاثرہ افراد کوریلیف فراہم کرنے کے حوالے سے مختلف جگہوں پرکیمپ بھی لگائے جائیں گے ۔ اجلاس میں سٹیٹ ڈیزاسٹرمینجمنٹ اتھارٹی کی طرف سے ملنے والی ہدایات پرعملدرآمدکویقینی بنانے کے سلسلہ میں تمام محکموں کے افسران کو ہدایات دی گئیں۔