09:32 am
 مودی نے مقبوضہ وادی کو کربلا  بنا رکھا ہے ، ضیا ءالقمر

مودی نے مقبوضہ وادی کو کربلا بنا رکھا ہے ، ضیا ءالقمر

09:32 am

مودی نے مقبوضہ وادی کو کربلا بنا رکھا ہے ، ضیا ءالقمر مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں بدلا جارہا ہے باغ ، ریڑہ ، نعمان پورہ (نمائندگان اوصاف )مرکزی چیئرمین پیپلز یوتھ آرگنائزیشن آزاد کشمیر و سابق امیدوار اسمبلی حلقہ شرقی باغ سردار ضیا ءالقمر نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت کا اقلیت میں بدل کر رائے شماری کا ڈھونگ رچانے کی ناکام کوشش کی جا رہی ہے تا کہ اپنی مرضی کے نتائج حاصل کیے جا سکیں۔ مقبوضہ کشمیر کے عوام کا قصور صرف اتنا ہے کہ وہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حق خودارادیت کا مطالبہ کر رہے ہیں اور ہندوستان سے آزادی چاہتے ہیں مودی نے مقبوضہ وادی کو کربلا کا میدان بنا رکھا ہے ۔ ایسے عالم میں اقوام متحدہ کی خاموشی کئی سوالات پیدا کر رہی ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں قابض افواج کی جانب سے بد ترین لاک ڈائون ، انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں ، شہری آزادیوں پر پابندی مہذب اقوام کے لیے لمحہ فکریہ ہے ۔ 80لاکھ لوگوں کو قید سے آزاد کروانے کے ساتھ ساتھ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کے لیے اقوام عالم اپنا کردار ادا کرے ۔ لائن آف کنٹرول پر ہندوستانی افواج کی جانب سے جان بوجھ کر نہتے شہریوں کی ٹارگٹ کلنگ قابل مذمت ہے ۔ آل پارٹیز کشمیر لبریشن الائنس میں باغ کی تمام سیاسی جماعتیں مبارک باد کی مستحق ہیں جنہوں نے اپنی سیاسی اختلافات کو ایک طرف رکھتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کے عوام سے اظہار یکجہتی کیا۔ اس سے پوری دنیا اور مقبوضہ کشمیر میں ایک مثبت پیغام گیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیپلز سیکرٹریٹ باغ میں صحافیوں کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ان کے ہمراہ صدر پاکستان پیپلز پارٹی ضلع باغ سردار عبدالمجید ایڈووکیٹ، جنرل سیکرٹری سردار اورنگزیب چغتائی ، سردار اعجاز بیگ،مسعود بیگ، عامر خورشید گردیزی، ڈاکٹر ریاض عباسی، عارف منہاس،تنویر رشید، لیاقت شاہین ،یاسین نور ودیگر بھی موجود تھے۔ سردار ضیا القمر نے کہا کہ 24اکتوبر کو زلزلہ متاثرہ علاقوں میں ہونے والی تباہی اور قیمتی جانوں کے ضیاع پر افسوس ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے حالات انتہائی تشویشناک ہیں مگر کشمیری اپنی آزادی کی جدوجہد سے مایوس نہیں ہیں ۔ گجرات کے قصائی نریندر مودی حکومت نے 05اگست کو مقبوضہ جموں کشمیر کی جداگانہ حیثیت و تشخص کو ختم کرنے کی غرض سے بھارتی آئین سے دفعہ 370اور 35الف کا خاتمہ کرنے کے بعد اپنی درندہ صفت 9لاکھ سے زائد فوج اور بدنامہ زمانہ آر ایس ایس کے غنڈوں کے ذریعے بے گناہ کشمیری مسلمانوں کا انتہائی بے دردری کیساتھ قتل عام شروع کر رکھا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 1947سے لیکر اب تک لاکھوں کشمیری اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کر چکے ہیں ۔ 1989سے لیکر اب تک 45438مسلمانوں کو شہید کر دیا گیا۔ 158048پابند سلاسل ہیں ۔ 15000سے زائد نوجوانوں کو بیلٹ گن کے ذریعے انکھوں کی بینائی سے محروم کر دیا گیا جبکہ 6000سے زائد نوجوان گھروں سے لاپتہ ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ وادی میں اشیاء خرد و نوش اور ادویات کی شدید قلت پیدا ہو چکی ہے ۔ معصوم بچے دودھ اور خوراک کی کمی کے باعث بلک رہے ہیں ۔ بیماروں کو علاج سے محروم کر دیا گیا ہے ۔ شہادت یا طبعی موت مرنے والوں کے لیے کفن و دفن کا بھی کوئی بندوبست نہیں ہے ۔ مظلوم کشمیری اپنا حق مانگ رہے ہیں اور بھارتی ظلم سہہ رہے ہیں مگر پوری دنیا خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے ۔مقبوضہ کشمیر کے عوام اپنی آزادی کی نہیں بلکہ تقسیم ہند کے نامکمل ایجنڈے یعنی تکمیل پاکستان کے ساتھ ساتھ دفاع پاکستان کی لڑائی بھی لڑ رہے ہیں ۔ پاکستان کی افواج بھارت کے سامنے سیسہ پلائی ہوئی دیوار بنی ہوئی ہے ۔ کشمیر کا ہر جوان پاک فوج کا بلا تنخواہ سپاہی ہے اور ان کے شابہ بشانہ لڑنے اور مرنے کے لیے تیار ہے ۔ ضیا ءالقمر

تازہ ترین خبریں