12:41 pm
  تاجر ظالمانہ ٹیکسز کو کبھی قبول نہیں کریںگے،حافظ طارق

تاجر ظالمانہ ٹیکسز کو کبھی قبول نہیں کریںگے،حافظ طارق

12:41 pm

تاجر ظالمانہ ٹیکسز کو کبھی قبول نہیں کریںگے،حافظ طارق ظالمانہ ٹیکسز کیخلاف آج پارلیمنٹ کے سامنے احتجاج کریںگے،صدر انجمن تاجران باغ ،ریڑہ(نمائندگا ن اوصاف)آل آزاد کشمیر انجمن تاجران کے مرکزی چیف آرگنائزر خان سلیم خان صدر انجمن تاجران باغ حافظ طارق محمود نے کہا ہے کہ آزاد کشمیر کے تاجروں پر ظالمانہ ٹیکسز کیخلاف آج پارلیمنٹ کے سامنے بھر پور احتجاجی مظاہرہ کریں گے ۔حکومت پاکستان نافذ ہونے والے ظالمانہ ٹیکس کو واپس لے آزاد کشمیر کے تاجر ظالمانہ ٹیکسز کو کبھی قبول نہیں کریںگے ۔حکومت عوام اور تاجروں کو لڑانے کے لئے اس طرح کے اقدامات اٹھا کر نفرت پھیلانے کی کوشش کر رہی ہے ان خیالات کا اظہار انھوں نے اسلام آباد روانگی سے قبل تاجران کے ایک اہم اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اجلاس سے سینئر نائب صدر چوہدری عابد ، جنرل سیکرٹری تاجران باغ افضل کشمیری ،سردار حاجی شاداد خان ملک اصغر ،سردار شبیر خان ،سردار آفتاب احمد ،چوہدری منصف ،ارشد زرگراور دیگر نے بھی خطاب کیا مقررین نے کہا کہ پورے آزاد کشمیر کی تاجر برادری سراپا احتجاج بن چکی ہے ۔آزاد کشمیر بھر کے تاجروں سے مشاورت کے بعد آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے حکومت عوام کو ریلیف دینے کے بجائے بے جا ٹیکسز لگا کر عوام سے دو وقت کی روٹی بھی چھیننا چاہتی ہے ۔انجمن تاجران آزاد کشمیر آل انجمن تاجران پاکستان سے مل کر اسلام آباد کی طرف لانگ مارچ کا اعلان کرنے جا رہی ہے کیونکہ فکس ٹیکسز سکیم پر ایف بی آر اور تاجروں کے ہونے والے مذاکرات ناکام ہو چکے ہیں ۔انھوں نے کہا کہ چیف سیکرٹری آزاد کشمیر معاملات کو درست سمت میں لانے کے لئے اقدامات اٹھائیں بصورت دیگر تاجران اسلام آباد کی طرف لانگ مارچ اور شٹر ڈائون پر مجبور ہوں گے حالات کی خرابی کی تمام تر ذمہ داری وفاقی حکومت پر عائد ہوگی ۔ حافظ طارق

تازہ ترین خبریں