11:55 am
لاکھوں کشمیر ی تحریک آزادی کو اپنے لہو سے سیراب کیا، جمیلہ سلطانہ

لاکھوں کشمیر ی تحریک آزادی کو اپنے لہو سے سیراب کیا، جمیلہ سلطانہ

11:55 am

لاکھوں کشمیر ی تحریک آزادی کو اپنے لہو سے سیراب کیا، جمیلہ سلطانہ 24 اکتوبر 1947 صدیوں کی قربانی کے روشن سویرے کا نام ہے،تقریب سے خطاب کوٹلی (سٹی رپورٹر)گورنمنٹ گرلزماڈل مڈل سکول منڈی کی صدرمعلمہ جمیلہ سلطانہ نے کہاہے کہ آزادجموں و کشمیر کا قیام محض اتفاق نہیں تھا بلکہ اس کیلئے کشمیریوں نے تاریخ ساز جدوجہد کی اور قربانیاں دی تھیں،24 اکتوبر 1947 صدیوں کی قربانی کے روشن سویرے کا نام ہے،بھارت کشمیری عوام کے جذبہ حریت میں کمی لا سکا اور نہ آئندہ لاسکے گا، لاکھوں کشمیر ی تحریک آزادی کو اپنے لہو سے سیراب کر چکے،19 جولائی 1947 کو سرینگر کے مقام پر ریاستی مسلمانوں نے قرارداد پاکستان منظور کر کے اپنا مستقبل پاکستان کے ساتھ وابستہ کر نے کا فیصلہ کیا تھا اور ڈوگرہ راج کے خلاف اعلان جہاد آزادی کرکے قرارداد الحاق پاکستان کو عملی شکل دینے کیلئے اپنی عملی جدوجہد کا آغاز کر دیا اور پندرہ ماہ تک مسلسل بھارتی افواج کا بھرپور مقابلہ کر کے آزادجموں و کشمیر میں آج ہی کے دن ایک انقلابی حکومت قائم کر دی۔ ان خیالات کااظہارانہوںنے 24اکتوبریوم تاسیس کے حوالہ سے گورنمنٹ گرلزماڈل مڈل سکول منڈی میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب سےام حبیبہ ،علیزہ آصف ،سعیدہ شہزادی،علیشہ کبیر،سمرینہ زبیر،لائبہ شکیل نے بھی خطاب کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ادارہ کی صدرمعلمہ جمیلہ شاہین نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بھارت نے 27اکتوبر 1947کو کشمیر پر فوجی یلغار کر کے کشمیریوں کی خواہشات اور امنگوں کے منافی کشمیر پر قبضہ جما لیا کشمیری عوام بھارت کے غیر قانونی تسلط کے خلاف گزشتہ 72سالوں سے بیش بہا قربانیاں دے رہے ہیں جبکہ بھارت علاقے پر اپنا ناجائز قبضہ بر قرار رکھنے کے لیے نہتے کشمیریوں کو بد ترین مظالم نشانہ بنا رہا ہے۔

تازہ ترین خبریں