10:15 am
  تعمیر و ترقی کے سفر کو  مزید تیز اور فعال کریں گے،وقار نور

تعمیر و ترقی کے سفر کو مزید تیز اور فعال کریں گے،وقار نور

10:15 am

تعمیر و ترقی کے سفر کو مزید تیز اور فعال کریں گے،وقار نور برنالہ کی تعمیر و ترقی کاسفر کارکنان اور ووٹرز کے تعاون سےجاری رہے گا برنالہ (واجد محمود سے ) یونین کونسل برنالہ کے گائو ں کلیاں شمالی سے مسلم کانفرنس تحصیل برنالہ کے مرکزی رہنما حاجی شراکت حسین جرال مستعفی ہو کراپنے درجنوں ساتھیوں کے ہمراہ مسلم لیگ (ن) میں شامل،کرنل (ر)وقار احمد نور کی بھرپور حمایت کااعلان، مسلم لیگ (ن) میں شامل ہونے والوں میں شراکت حسین،حاجی لیاقت حسین، یاسر حسین،ناصر حسین،فیصل حسین،مختار حسین جرال،مجدد حسین جرال،عمیر شہزاد،محمد بشیر،راجہ قیوم ،چوہدری طالب حسین،مرزا فضل حسین،مرزا رفیق ،مرزا اعجاز ،مرزا شیراز،مرزا کاشف ،مرزا عارف و دیگرشامل ہیں،اس موقع پر رہنما مسلم لیگ (ن) لئیق محمود عامر ایڈووکیٹ،مرزا ایوب جرال،حافظ عبدالرحمٰن واحد و دیگر نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے،وزیر ہائر ایجوکیشن کرنل (ر) وقار احمد نور نے کہا کہ اپنے مخلص ساتھیوں اور کارکنان پر فخر ہے۔حلقہ برنالہ کی تعمیر و ترقی کے لئے جویہ سفر شروع ہوا،ساتھیوں کارکنان اور ووٹرز کے تعاون کے ساتھ جاری رہے گا۔تین سال کی کارکردگی عوام کے سامنے ہے ۔جو دو سال رہ گئے ہیں۔اس میں تعمیر و ترقی کے اس سفر کو مزید تیز اور فعال کریں گے۔حلقہ برنالہ کے عوام کو یقین دلاتا ہوں کہ آئندہ انتخابات میں میرے حلقہ کے عوام کو کوئی بھی سیاستدان ٹونٹی ،نلکے اور گلی کی سیاست پر بلیک میل نہیں کر سکے گا۔ حکومت کی طرف سے جو وسائل ملے ہیں انہیں ایمانداری اور نیک نیتی کے ساتھ اللہ کے سامنے جوابدہی کے ساتھ عوام پر خرچ کیا ہے۔اور جس کا یہ ثمر ہے کہ آج انتخابات سے دو سال قبل ہی دوسری جماعتوں کے باشعور اور نمایاں لوگ ہمارے قافلے میں شامل ہو رہے ہیں۔مخلص ساتھی اور کارکنان میرا فخر اور اعزاز ہیں۔ان کے مشورے اور رائے کے ساتھ اس حلقہ کو سنوارنے کا مشن جاری ہے۔ مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کررہے ہیں۔ہمارے حلقہ کا سب سے بڑا مسئلہ وولٹیج کی کمی کا تھا۔نئی فیڈر لائن لگا کر حل کیا۔اب دوسرے فیڈر کے پول نصیب ہوچکے ہیں۔چند دن تک کام کرناشروع کر دے گا۔اب میٹر آپ کے گھر بغیر چکر اور اصل قیمت پر مہیاہوتے ہیں۔ اس عرصہ میں ستر نئے ٹرانسارمر نصیب کروائے ہیں۔جبکہ سابقہ پانچ سال میں صرف سولہ ٹرانسفارمر آئے۔وہ بھی ٹاؤٹس کو اس شرط پر دیئے گئے کہ لوگ اکھٹے کرو ۔ووٹ کا حلف لو۔پھر لگانا۔اللہ کے فضل سے اس لعنت سے چھٹکارا دلوایا گیا۔ بجلی کے پولز محکمہ خود سروے کر کے تاروں بجری ریت سمیت تنصیب کرتا ہے۔کسی ٹاؤٹ کے گھر ڈھیر نہیں لگائے جاتے۔محکمہ تعلیم میں حلقہ کی تمام خالی آسامیاں میرٹ پر پر کی گئیں ہیں۔ایسے سکول تھے جہاں چھ چھ اساتذہ کی آسامیاں خالی چلی آ رہی تھی۔اساتذہ دستیاب کئے گئے۔ این ٹی ایس کے نفاذ سے بلا تفریق سیاست میرٹ پر اساتذہ بھرتی ہو رہے ہیں۔تین سو سے زائد نئے اساتذہ تعینات ہوئے ہیں۔۔اور اس دو سال کے دوران سرکاری سکولز میں تین ہزار سے زائدنئے بچے داخل ہوئے ہیں۔سرکاری اداروں پر اعتماد بحال کروانا عام بات نہیں تھی۔پٹوار خانہ ایک جگہ اکٹھا کیا گیا۔پہلے یہی پٹواری تلاش کرنے کے لیے کتنے کتنے دن لگ جاتے۔الحمد اللہ پورا حلقہ جانتا ہے۔اب تمام پٹواری بر وقت دفتر آتے ہیں۔اور ایک چھت کے نیچے دستیاب ہیں۔اور لین دین میں کمی آئی ہے۔اب سودا بازی چھپ چھپا کر کی جائے تو اس کا علاج نہیں۔البتہ سامنے کسی کی ہمت نہیں رشوت مانگے۔ وقار نور

تازہ ترین خبریں