تازہ ترین  
پیر‬‮   17   دسمبر‬‮   2018

پاکستان کی اہم ترین سکیورٹی شخصیت افغانستان میں قتل خبر سنتے ہی شہر یار آفریدی کا بھی دھماکے دار بیان جاری


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)خیبر پختونخوا کے ایس پی محمد طاہر داوڑ جو اسلام آباد سے لاپتہ ہو گئے تھے ، کے بارے میں انتہائی تشویشناک خبر آگئی ہے ۔ انھیں افغانستان میں قتل کر دیا گیا ہے۔نجی ٹی وی چینل جیو نیوز نے اپنی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اسلام آباد سے لاپتہ ہونے والے خیبر پختونخوا پولیس کے ایس کو افغانستان میں قتل کر دیا گیا ہے۔ ان کی تشدد زدہ لاش افغان صوبے ننگر ہار سے برآمد ہوئی ہے۔ یس پی محمد طاہر خان داوڑ 27اکتوبر کواسلام

آباد کے ایف 10سیکٹر میں واک کرتے ہوئے غائب ہوگئے تھے اور اس کے بعد ان کی کچھ خبر نہ ملی تھی لیکن اب افغانستان کے صوبہ ننگر ہار میں ان کی تشدد زدہ لاش بر آمد ہوئی ہے اورلاش کے پاس ایک تحریر بھی پائی گئی ہے جس میں ان کے قتل کرنیوالے کی جانب سے پیغام دیا گیا ہے کہ کس بنا پر ایس پی محمد طاہر خان داوڑ کوقتل کیا گیا ۔واضح رہے کہ خیبرپختونخواہ کے دارالحکومت پشاور میں تعینات ایس پی طاہر خان داوڑاہل خانہ کے مطابق چھٹیوں پر تھے اور وہ ذاتی کام کے سلسلے میں اسلام آباد پہنچے جس کے بعد ان سے اچانک موبائل فون پر رابطہ ہونا بند ہوا جس کے بعد اہلیہ نے محکمہ پولیس کو اطلاع دی۔آئی جی کے پی کے خیبرپختونخواہ صلاح الدین محسود نے طاہر خان داوڑ کی گمشدگی پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ اسلام آباد پولیس سمیت دیگر اداروں کے ساتھ مکمل رابطے میں ہیں، معاملے کا تمام پہلووں کو مدنظر رکھتے ہوئے جائزہ لے رہے ہیں۔ اس بارے میں بات کرتے ہوئے وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار خان آفریدی کا کہنا ہے کہ یہ حساس معاملہ ہے ۔اللہ نہ کرے ایسا ہوا ہو۔ اس پر بات نہیں کرسکتے ۔ففتھ جنریشن اورسائبروارہم پرمسلط کردی گئی ہے۔




 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں


آج کا مکمل اخبار پڑھیں

تازہ ترین خبریں




     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved