قندیل بلوچ قتل کیس کے گرفتار ملزم مفتی عبدالقوی کے دل کی بائیں شریان بند،ڈاکٹرز کا اسپتال سے ڈسچارج کرنے سے انکار
  21  اکتوبر‬‮  2017     |     اہم خبریں

ملتان( آئی این پی)ملتان کے کارڈیالوجی اسپتال میں داخل قندیل بلوچ قتل کیس کے گرفتار ملزم مفتی عبدالقوی کی انجیوگرافی کی رپورٹ آگئی۔ڈاکٹرز نے انکشاف کیا ہے کہ مفتی عبدالقوی کے دل کی بائیں شریان بند ہے۔انہیں اسپتال سے ڈسچارج نہیں کرسکتے۔ایم ایس کارڈیالوجی انسٹی ٹیوٹ اسپتال ملتان ڈاکٹر ظفر علوی نے میڈیا کو بتایا کہ اسپتال کی چار رکنی ڈاکٹرز کی میڈیکل ٹیم نے مفتی قوی کی اینجیو گرافی رپورٹ کا معائنہ کیا ہے جس کے مطابق مفتی عبدالقوی کی بائیں شریان بلاک ہے

، یہ موڈریٹ ڈیزیز ہے جس کیلئے ان کی دوبارہ انجیو گرافی کی جائے گی۔ مفتی عبدالقوی کو طبیعت سنبھلنے تک ہسپتال سے ڈسچارج کرنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ابھی مفتی عبدالقوی کو اسپتال میں ہی رکھا جائے گا۔ مفتی عبدالقوی کی دوبارہ اینجیو گرافی سوموار یا منگل کو ہو گی۔ڈاکٹرز کے مطابق گزشتہ سال مفتی عبدالقوی کے دل میں اسٹنٹ ڈالے گئے تھے، پریشانی کے حالات میں اسٹنٹس میں رکاوٹ پیدا ہو سکتی ہے۔واضح رہے کہ مفتی عبدالقوی قندیل بلوچ قتل کیس میں 4 روزہ ریمانڈ پر پولیس کی حراست میں تھے کہ اس دوران ان کے سینے میں تکلیف ہوئی جس پر انہیں ملتان کے کارڈیالوجی ہسپتال میں منتقل کیا گیا،جہاں ڈاکٹرز نے مفتی عبدالقوی کی انجیوگرافی مکمل کر لی اور انہیں میڈیکل وارڈ میں منتقل کر دیاہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اہم خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved