ہر طرف کچر ے نے سر اٹھا لیا، 2 سال میں 20 کروڑ کا خرچہ، نتیجہ صفر:کوئٹہ
  25  جنوری‬‮  2018     |     پاکستان

کوئٹہ (نیوز ڈیسک ) کوئٹہ کی صفائی ستھرائی کے لئے بھرتی کئے جانے والے سینکڑوں خاکروب کام کم اور گھروں میں بیٹھ کر تنخواہ زیادہ کھانے کے عادی ہو گئے، شہر میں صفائی نہ ہونے سے کچرے نے سر اٹھا لیا۔صوبائی دارالحکومت کوئٹہ جس کی صفائی پر گذشتہ دو سالوں کےدوران 20 کروڑ ورپے سے زائد کی رقم خرچ ہوئی لیکن صورتحال میں بہتری صفرہے۔

کچھ علاقوں میں ہفتے میں ایک ادھ بار اور اکثرمیں مہینوں صفائی کرنے والا عملہ دکھائی نہیں دیتا۔ میٹروپولیٹن کارپوریشن نے 1100 افراد کو شہر کی صفائی کی غرض سے ڈیلی ویجز پر بھرتی کیا، یہ صفائی کرنے والے پھیلتے شہر اور بڑھتی آبادی کے تناسب سے بہت کم ہیں۔کارپوریشن کے پاس مستقل طور پر صفائی کے لئے بھرتی کئے جانے والے 450 افراد ہیں جن میں سے بہت سے ایسے ہیں جو کونسلرز کے ساتھ مک مکاؤ کر کے ڈیوٹی انجام نہیں دیتے۔ میئر کوئٹہ ڈاکٹرکلیم اللہ کا کہنا ہے کہ صفائی کا نظام بہتر بنانے کے لئے وسائل کم اور افرادی کی قوت کی اشد ضرورت ہے۔عوامی حلقوں نے مطالبہ کیا ہے کہ کوئٹہ کو لٹل پیرس بنانے کے دعویداروں کو چاہیے کہ وہ تمام صفائی والے عملے سے بلا امیتاز کام لیں اور شہر کی صفائی پر توجہ دیں۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

پاکستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved