05:33 pm
حناربانی کھر سمیت کئی اہم ملکی سیاستدانوں کی شامت آگئی

حناربانی کھر سمیت کئی اہم ملکی سیاستدانوں کی شامت آگئی

05:33 pm

اسلام آباد(آئی این پی) قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ نے 13 انکوائریوں کی منظوری دیدی جن میں ،سابق ایم این اےغلام ربانی کھر ،سابق وفاقی وزیرمملکت خارجہ و خزانہ ، حنا ربانی کھرکے خلاف 2انکوائریز،سابق سیکرٹری مواصلات و چیئرمین این ایچ اے شاہد اشرف تارڑ ، اور دیگرکے خلاف 2انکوائریز، سابق چیئرمین متروکہ وقف املاک بورڈصدیق الفاروق،سابق منیجنگ ڈائریکٹر بیت المال بیرسٹر شیخ عابد وحید، اور دیگرکے خلاف انکوائریاں شامل ہیں ،
7انو یسٹی گیشنزکی منظوری بھی دی گئی جن میں سابق وزیر اعظم چوہدری شجاعت حسین ،سابق وزیر اعلیٰ پنجاب اور موجودہ سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الٰہی اور دیگر کے خلاف 3 انویسٹی گیشنز ،میسرز ٹی ایم کے شوگر ملز کراچی اور دیگر،کے پی ٹی آفیسرز کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی کی انتظامیہ اور دیگر ، نور محمد لغاری ،سابق سیکرٹری سپیشل ایجوکیشن حکومت ، محمد علی خاصخیلی ،پرنسپل سیکرٹری ٹو سیکرٹری سپیشل ایجوکیشن اور دیگر،،بلوچستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی گوادر کے افسران /اہلکاران اور دیگر شامل ہیں ،فاٹا ہیلتھ سروسز ڈائریکٹریٹ کے افسران /اہلکاران اور دیگرکے خلاف انکوائری چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا ، لبنی صلاح الدین ،سابق چیف انسپکٹر سٹیمپس،بورڈ آف ریونیو، حکومت سندھ کے افسران /اہلکاران اور میسرز چائینہ انٹرنیشنل واٹر اینڈ الیکٹرک کارپوریشن اور دیگرکے خلاف انویسٹی گیشن چیف سیکرٹری سندھ کومزید قانونی کارروائی کیلئے بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا۔ جمعرات کو قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس جاوید اقبال کی زیرصدارت نیب ہیڈکوارٹر ز اسلام آبادمیں منعقد ہوا ۔ نیب اس بات کو واضح کرنا چاہتا ہے کہ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس کے بارے میں تفصیلات عوام کو فراہم کی جائیں جو طریقہ گزشتہ کئی سالوں سے رائج ہے جس کا مقصد کسی کی دل آزاری مقصود نہیں ۔ تمام انکوائریاں اورانویسٹی گیشنز مبینہ الزامات کی بنیاد پر شروع کی گئی ہیں جوکہ حتمی نہیں۔ نیب قانو ن کے مطابق تمام متعلقہ افراد سے بھی ان کا موقف معلوم کرے گا جس کے بعد مزید کاروائی کرنے یا نہ کرنے کا فیصلہ کیا جاتا ہے۔قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں13 انکوائریوں کی منظوری دی گئی۔ جن میںغلام ربانی کھر،سابق ایم این اے، حنا ربانی کھر،سابق وفاقی وزیر ،کے خلاف 2انکوائریز، شاہد اشرف تارڑ ،سابق سیکرٹری مواصلات و چیئرمین این ایچ اے اور دیگرکے خلاف 2انکوائریز، سابق چیئرمین متروکہ وقف املاک بورڈصدیق الفاروق،سابق منیجنگ ڈائریکٹر بیت المال بیرسٹر شیخ عابد وحید، اور دیگر، سابق چئیرمین متروکہ املاک بورڈ اور افسران /اہلکاران اور دیگر ،ڈاکٹر محمد التمش اور دیگرکے خلاف 2 الگ انکوائریاں، فیصل کنٹونمنٹ بورڈ کراچی کے سی ای اوز اور ایڈمینسٹریٹو افسران اور دیگر،ٹوورزم کارپوریشن خیبر پختونخواہ کے افسران /اہلکاران، بھائی خان لاکھو،سیف اللہ مگسی سرکل محکمہ آبپاشی ، شفقت حسین واڈو،جاوید میمن،منور بزدار،چیف انجینئر ،عبدالمجیدایکسین اور دیگر،علی احمد لنڈ،ایڈمنسٹریٹو میونسپل کمیٹی روہڑی اور دیگرشامل ہیں۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں 7انو یسٹی گیشنزکی منظوری دی گئی جن میں سابق وزیر اعظم چوہدری شجاعت حسین ،سابق وزیر اعلیٰ چوہدری پرویز الٰہی اور دیگر کے خلاف 3 انویسٹی گیشنز ،میسرز ٹی ایم کے شوگر ملز کراچی اور دیگر،کے پی ٹی آفیسرز کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی کی انتظامیہ اور دیگر ، نور محمد لغاری ،سابق سیکرٹری سپیشل ایجوکیشن حکومت ، محمد علی خاصخیلی ،پرنسپل سیکرٹری ٹو سیکرٹری سپیشل ایجوکیشن اور دیگر،،بلوچستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی گوادر کے افسران /اہلکاران اور دیگر شامل ہیں ۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میںفاٹا ہیلتھ سروسز ڈائریکٹریٹ کے افسران /اہلکاران اور دیگرکے خلاف انکوائری چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا کومزید قانونی کارروائی کیلئے بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں لبنی صلاح الدین ،سابق چیف انسپکٹر سٹیمپس،بورڈ آف ریونیو، حکومت سندھ کے افسران /اہلکاران اور میسرز چائینہ انٹرنیشنل واٹر اینڈ الیکٹرک کارپوریشن اور دیگرکے خلاف انویسٹی گیشن چیف سیکرٹری سندھ کومزید قانونی کارروائی کیلئے بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میںسابق چیئرمین متروکہ املاک بورڈ آصف ہاشمی ،پرائیویٹ سیکرٹری ظفر اقبال،ڈپٹی ایڈمنسٹریٹر قصور اکرم جوئیہ اور دیگر کا معاملہ مزید قانونی کارروائی کیلئے وزارت مذہبی امور کو بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا۔ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں سابق سیکرٹری وزارت پانی و بجلی شاہد رفیع اور دیگر کی کوئٹہ سے اسلام آباد بدعنوانی کا ریفرنس منتقل کرنے کی درخواست قانون کے مطابق مسترد کر دی۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں بدعنوانی کے3 ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی گئی۔ جن کی تفصیل درج ذیل ہے۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میںکامران لاشاری ،سابق چئیرمین سی ڈی اے، غلام سرور سندھو، سابق ڈائریکٹر اربن پلاننگ سی ڈی اے ،منیر جیلانی ،سابق ڈائریکٹرلینڈ سروے ڈویژن سی ڈی اے ،محمد حسنین گل منیجنگ ڈائریکٹرمیسرز ڈپلومیٹک شٹل اینڈ ٹرانسپورٹ سروس ،نصرت اللہ،سابق ممبرپلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ سی ڈی اے اور دیگر کے خلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دی گئی۔ ملزمان پرمبینہ طور پر غیر قانونی طور پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے ڈپلومیٹک شٹل اینڈ ٹرانسپورٹ سروس کا غیر قانونی ٹھیکہ اور لائسنس دینے کا الزام ہے۔ جس سے قومی خزانے کو 408.32ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں اورنگزیب ،سابق سیکرٹری لوکل گورنمنٹ ڈیپارٹمنٹ خیبر پختونخواہ ،اصغرخان، سابق ڈپٹی پراجیکٹ ڈائریکٹرسی ڈی ڈبلیو اے ،میسرز آئیڈیل ہائیڈرو ٹیک سسٹمز پاکستان پرائیویٹ لمیٹڈکے چیف ایگزیکٹوآفیسر / ڈائریکٹرز اور دیگر کے خلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دی۔ملزمان پر مبینہ طور "پینے کا صاف پانی سب کے لئے منصوبے کے لئے مختص فنڈز میں خرد برد کرنے کا الزام ہے۔جس سے قومی خزانے کو195.043ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میںعاشق علی لکھن ،سابق ایکسئین ھالہ ڈویثرن محکمہ آبپاشی اور دیگرکے خلاف بد عنوانی کا ریفرنس دائر کرنے کی منظورری دی گئی۔ملزم پرمبینہ طور پر اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے سرکاری فنڈز میں خردبرد کا الزام ہے۔جس سے قومی خزانے کو تقریباَ 3کروڑ98لاکھ46ہزار روپے کا نقصان پہنچا۔نیب کے ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے ڈی ایچ اے کے افسران /اہلکاران اور اے کے ڈی ریئل اسٹیٹ اور دیگرجبکہ ایڈمنسٹریٹر میونسپل کمیٹی روہڑی و دیگر اور محمد شریف مغیری ایکسئین محکمہ آبپاشی جیکب آباد و دیگر ،دادڈویژن کے افسران /اہلکاران اور دیگر کے خلاف عدم شواہد کی بنیاد پرقانون کے مطابق انکوائریاں جبکہ میسرز ٹی اینڈ این پاکستان پرائیویٹ لمیٹڈ فیصل آباد کے ڈائریکٹر اور دیگرکے خلاف عدم شواہد کی بنیاد پرقانون کے مطابق انوسٹی گیشن بند کرنے کی منظوری دی۔ چیئرمین نیب جسٹس(ر) جاوید اقبال نے کہا کہ بدعنوانی تمام برائیوں کی جڑہے ۔نیب بدعنوانی کے خاتمے کے لئے زیرو ٹالرنس کی حکمت عملی پر عمل پیرا ہے۔ میگا کرپشن کے مقدما ت کو منطقی انجام تک پہنچاناہماری اولین ترجیح ہے ۔ نیب ملک سے بدعنوانی کے خاتمے کے لئے © ©’ احتساب سب کے لیے © © © © © “ کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہے۔ انہوں نے ہدایت کی کہ تمام شکایات کی جانچ پڑتال ، انکوائریاں اور انوسٹی گیشنز کو قانون، میرٹ، شفافیت اور ٹھوس شوائد کی بنیا د پر منطقی انجام تک پہنچائی جائیں ۔ نیب کی پہلی اور آخری وابستگی پاکستان سے ہے ۔ نیب افسران اپنے فرائض ایمانداری ، میرٹ، شفافیت اور قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے سرانجام دیں۔

تازہ ترین خبریں