06:57 pm
دہلی، ممبئی ، کولکتہ، بنگلور ، چنائی اور چندی گڑھ کے مندروں میں پوجا شروع ہو گئی

دہلی، ممبئی ، کولکتہ، بنگلور ، چنائی اور چندی گڑھ کے مندروں میں پوجا شروع ہو گئی

06:57 pm

راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) پاک فوج نے بھارت کو جواب دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت اب ہمارے جواب کا انتظار کرے۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم نے جواب دینے کے لیے وقت اور جگہ کا تعین کرلیا ہے اب بھارت انتظار کرے۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ بھارت کوچیلنج کرتےہیں کہ 21 منٹ تک پاکستان کی فضائی حدود میں رہ کر دکھائے۔ترجمان پاک فوج کا کہنا ہے کہ ہم مختلف جواب دیں گے اور سرپرائز کریں گے صرف اتنا کہیں گے کہ انتظار کریں۔انہوں نے کہا کہ بھارت کو جواب دینے کیلیے تمام آپشن کھلے ہیں، پہلے بھی بھارت کے پول کھول چکےہیں،
اب ابھی بےنقاب کریں گے،سب ایک ہیں،بھارت ہماری جوابی کارروائی کا انتظار کرے۔ترجمان پاک فوج نے کہا کہ بھارتی میڈیا کہتا ہے کہ بھارتی جنگی طیارے 21 منٹ تک پاکستان میں رہے اور انہوں نے 350 سے زائد افراد کو ہلاک کیا۔ بھارت آئے اور 21 منٹ پاکستان میں رہ کر دکھائے۔انہوں نے کہا کہ بھارت کو واضح کیا تھا کہ اگر حملہ ہوا تو فوری جواب آئے گا۔بھارت زمین پر آتا تو اس کو ویسا جواب ملتا جو ہم نے پلان کیا تھا۔ترجمان پاک فوج نے کہا کہ چند روز سے بھارت اور پاکستان کےدرمیان کشیدگی جاری ہے، رات کے وقت ہماری ٹیم معمول کی پرواز پر تھی، ریڈار پر بھارتی طیاروں کی پہلی پوزیشن لاہور سیالکوٹ سیکٹر کی جانب بڑھتے ہوئے دیکھی گئی۔ لیکن بھارتی طیاروں نے لائن آف کنٹرول کو عبور کیا۔ آزاد کشمیر کے راستے خیبر پختونخوا کے علاقے بالاکوٹ تک آئے اور واپسی میں جبہ کے مقام پر 4 بم گرائے۔ترجمان نے کہا کہ جھوٹ کے پاؤں نہیں ہوتے، کوئی ایک اینٹ بھی نہیں ٹوٹی،اگر کوئی انفراسٹرکچر تباہ ہوتا تو وہاں ملبہ ہوتا۔موسم کی خرابی کی وجہ سے صحافیوں کونہیں لے جاسکے۔انہوں نے کہا کہ پاک فضائیہ حالت کی کشیدگی کے تناظر میں تواترسے پیٹرولنگ کررہی ہے، ہم نے کہا تھا کہ بھارت نے حملہ کیا تو ہم اسے حیران کردیں گے۔میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ بھارتی طیاروں نے ٹھکانے تباہ کیے ہیں تو کہاں ہے ملبہ اور لاشیں؟ بھارت پاکستانی فوجی تنصیب پر حملہ کرنے کا فیصلہ کرتا تو وہ ایل اوسی کراس کیے بغیر کرسکتا تھا۔ بھارتی فضائیہ کا مقصد شہری آبادی کو نشانہ بنانا تھا۔ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ دو جمہوریتیں کبھی آپس میں نہیں لڑتیں۔ بھارت نے ثابت کیا ہے کہ وہاں جمہوریت نہیں ہے، ہمارے ہاں جمہوریت ہے، ہمارے یہاں اتفاق رائے ہے۔انہوں نے کہا کہ پچھلے چند دنوں سے پاکستان اور بھارت کے درمیان حالات میں کشیدگی چل رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہماری بدقسمتی یہ ہے کہ ہمارا ہمسایہ بھارت دشمنی میں بھی بے وقوفی اور جھوٹ کا سہارا لیتا ہے، آئے 21 منٹ تک پاکستان کی فضائی حدود میں رہ کر دکھائیں۔ڈی جی آئی ایس پی آرنے کہا کہ بھارتی فضائیہ کا مقصد شہری آبادی کو نشانہ بنانا تھا،بھارت پاکستانی فوجی تنصیب پرحملہ کرنے کا فیصلہ کرتا تووہ ایل اوسی کراس کیےبغیرکرسکتا تھا۔ انہوں نے کہا کہ جائے وقوعہ سب کیلیے کھلاہے، تصدیق کی جاسکتی ہے،ہم بھارتی جارحیت کا منہ توڑ جواب ضرور دیں گے۔ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ ہم نے خطے میں امن کیلیے قربانیاں دیں ہیں، بھارتی جارحیت کے خلاف تمام سیاسی جماعتیں اور عوام متحد ہیں۔انہوںے نے کہا کہ بھارت دشمنی میں بھی بےوقوفی اورجھوٹ کا سہارا لیتا ہے،بھارت کو واضح کیاتھا کہ اگر حملہ ہوا تو فوری جواب آئیگاان کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نے کہا تھا کہ حملہ کیا تو جواب کا سوچیں گے نہیں جواب دیں گے۔

تازہ ترین خبریں