08:51 am
ڈانس وڈیو لیک ہونے کے بعد اسما عزیز کیس میں ایک اور تہلکہ خیز نیاموڑ

ڈانس وڈیو لیک ہونے کے بعد اسما عزیز کیس میں ایک اور تہلکہ خیز نیاموڑ

08:51 am

اسلام آباد(نیو زڈیسک) لاہور کے پوش علاقہ ڈیفنس میں تشدد کا نشانہ بننے والی اسما کے شوہر فیصل سے متعلق نئے انکشافات سامنے آگئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے تشدد کا نشانہ بننے والی اسما نے بتایا کہ میرا شوہر لڑکیوں کو چلاتا تھا اور سب نے مجھے کہا تھا کہ یہ ایک دن تمہیں بھی چلائے گا اور وہی ہوا۔اُس رات گھر میں ملازم تھے ،
میرے شوہر نے سب کو کہا کہ اس کے ساتھ جو مرضی کرو۔ مجھے سب کے سامنے کپڑے اُتارنے کا بھی کہا۔ اسما کے شوہر فیصل سے متعلق انکشاف ہوا کہ وہ امیر لڑکیوں کو پھنسا کر ان سے شادی کرلیتا تھا۔ اور پھر انہیں اپنے گھناؤنے مقاصد کے لیے استعمال کرتا تھا۔ اسما سے فیصل کا یہ تیسرا نکاح ہے۔اسما نے فیصل جیسے شخص کے لیے اپنے سابق شوہر اور دو بچوں کو بھی چھوڑ دیا ۔اس حوالے سے اسما کا کہنا تھا کہ جب بُرا وقت آتا ہے تو انسان کی عقل پر پردہ پڑ جاتا ہے۔ میں نے اپنا گھر بھی ختم کر لیا جو کہ غلط تھا۔ واضح رہے کہ اسما کی حال ہی میں ایک ڈانس کی ویڈیو بھی سامنے آئی تھی۔ اس ویڈیو سے متعلق بات کرتے ہوئے اسما عزیز نے کہا کہ میری وہ ویڈیو ماضی کا حصہ ہے جس کی سزا میں چار سال تک بھگتتی رہی۔ انہوں نے کہا کہ میں عوام سے یہی کہوں گی کہ اگر میں نے ماضی میں کوئی غلطی کی بھی ہے تو مجھے چار سال ہو گئے ہیں کہ میں اس غلطی کی سزا بھگت رہی ہوں۔میں چاہتی ہوں کہ اب باقی لوگ اس سے بچ جائیں۔ اسما کے شوہر فیصل سے متعلق یہ انکشاف بھی سامنے آیا تھا کہ وہ ڈاکو ہے اور اس کے خلاف مخلتف تھانوں میں 8 ایف آئی آر کے اندراج کا ریکارڈ موجودہے۔ ملزم کے خلاف ستو کتلہ تھانہ اور جوہر ٹاؤن تھانے میں کاریں چھیننے کے مقدمات درج ہیں،جب کہ تھانہ قلعہ گجر سنگھ میں شہری پر تشدد کرنے کی ایف آئی آر درج ہے، ڈیفنس ایریا تھانے میں پستول سے تشدد کرنے اور گاڑیاں چھیننے کی ایف آئی آر درج اور اب تھانہ کاہنہ میں بیوی پر تشدد کرنے کی ایف آئی آر درج ہے۔پولیس ریکارڈ کے مطابق فیصل نامی نوجوان عادی مجرم ہے اسے ہر ایف آئی آر کے بعد گرفتار تو کیا گیا تاہم پھر اسے ہمارے پولیس سسٹم نے بچا لیا۔ یاد رہے کہ لاہور کے پوش علاقہ ڈیفنس میں ایک شخص نے دوستوں کے سامنے ڈانس کرنے سے انکار پر اپنی بیوی پر تشدد کیا اور اس کے سر کے بال مونڈھ دئے تھے۔