08:13 am
دباؤحد سے زیادہ بڑھ جانے کے بعد وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے اچانک بڑا قدم اٹھا لیا

دباؤحد سے زیادہ بڑھ جانے کے بعد وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے اچانک بڑا قدم اٹھا لیا

08:13 am

اسلام آباد(ویب ڈیسک) وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے پراپرٹی ٹیکس ادا کر ہی دیا، ایکسائزڈیپارٹمنٹ نےستائیس ہزار روپےکے ٹیکس کانوٹس جاری کیاتھا جبکہ سکندر حیات،یوسف رضاگیلانی ملک عامر،رفیق رجوانہ نےبھی تاحال پراپرٹی ٹیکس جمع نہیں کرایا۔ وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے پراپرٹی ٹیکس ادا کردیا ، جس کے بعد ڈائریکٹر ایکسائز نے کلیئرنس لیٹر جاری کردیاہے، وزیرخارجہ نے قادر پوراں والی پراپرٹی کا ٹیکس ادا کیا،
ایکسائز ڈیپارٹمنٹ نے ستائیس ہزار روپے کے ٹیکس کا نوٹس جاری کیاتھا۔دوسری جانب وزیرخارجہ نےجائیداد ریکارڈ کی درستی کی درخواست بھی جمع کرادی ہے، درخواست میں موقف دیاکہ قادر پورراں والے رہائشی ڈیرے کوگودام ظاہر کیاگیا، جو درست نہیں۔اب تک سابق وفاقی وزیر سکندر حیات، سابق وزیر اعظم یوسف رضاگیلانی ملک عامر، سابق گورنر پنجاب رفیق رجوانہ نے بھی تاحال پراپرٹی ٹیکس جمع نہیں کرایا۔خیال رہے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ملتان ں 200 سے زائد ٹیکس ڈیفالٹرز کو نوٹس بھجوائے تھے ، جن میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی , سابق گورنر پنجاب رفیق رجوانہ اوردیگر اہم سیاسی شخصیات بھی ٹیکس نادہندہ نکلیں تھیں۔اس حوالے سے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے دستاویزات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے ذمہ پراپرٹی ٹیکس کی مد میں 27ہزار ،680 روپے واجب الادا تھیں، سابق گورنر پنجاب رفیق رجوانہ 6 لاکھ 94 ہزار 471جبکہ سابق وفاقی وزیر سکندر بوسن 3 لاکھ 40 ہزار59 کے ڈیفالٹر ہیں ۔سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی کے ذمہ لگژری ہاؤس ٹیکس کی مد میں 6 لاکھ 67 ہزار500 واجب الادا ہیں۔ڈپٹی ڈائریکٹر ایکسائز نے 7 ریکوری افسران کو بھی معطل کر دیا تھا جبکہ 7 انسپکٹرز کے خلاف پیڈا ایکٹ کے تحت کارروائی شروع کر دی گئی تھی، یاد رہے کہ ایکسائزڈیپارٹمنٹ نے وزیر خآرجہ کو ستائیس ہزار روپےکے ٹیکس کانوٹس جاری کیاتھا۔ جس کے بعد وزیر خآرجہ نے وہ ٹیکس جمع کرا دیا ہے۔

تازہ ترین خبریں