10:48 am
حرمین شرفین کو خطرہ۔۔۔؟ جنرل زبیر محمود حیات نے خطر ناک بات کہہ دی

حرمین شرفین کو خطرہ۔۔۔؟ جنرل زبیر محمود حیات نے خطر ناک بات کہہ دی

10:48 am

اسلام آباد: چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات نے کہاہے کہ پاکستانی افواج کسی مس ایڈونچر اور مس کیلکولیشن کا جواب دینے کیلئے تیار ہیں لہٰذا کسی بھی جارحیت کا بھرپور جواب دینےکی صلاحیت رکھتے ہیں اور ضرور دیں گے۔اسلام آباد میں پاکستان سمٹ سے خطاب کرتے ہوئےچیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات نے کہا کہ اس وقت دنیا میں طاقت کا محور تبدیل ہورہا ہے اور نئی طاقتیں ابھررہی ہیں، دنیا میں جنگی ساز و سامان کی بڑے پیمانے پر لین دین جاری ہے،
پاکستان کو اپنے مفاد اور دفاع کیلئے اس شعبے میں توجہ دینی ہے۔انہوں نے کہا کہ دنیا میں ایک طرف اسلام فوبیا پروان چڑھ رہا ہے، پاکستان دنیا کا دوسرا بڑا اسلامی ملک ہے، دنیا بھر میں مسلم ممالک کو مختلف مسائل اور بحران کا سامنا ہے، جب تک مشرق وسطیٰ میں امن قائم نہیں ہوگا حرمین شریفین کوخطرہ لاحق رہےگا، جب تک کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوگا یہ مسئلہ اس خطے کا فلیش پوائنٹ بنا رہےگا، کشمیریوں نے بھارتی تسلط کو مسترد کیا ہے، کشمیر میں مظالم کی داستان اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ سامنے لائی ہے، کشمیریوں نے ہزاروں کی تعداد میں جانوں کی قربانی دی ہے۔جنرل زبیر کا کہنا تھاکہ پاکستانی افواج کسی مس ایڈونچر اور مس کیلکولیشن کا جواب دینے کیلئے تیار ہیں، کسی بھی جارحیت کا بھرپور جواب دینےکی صلاحیت رکھتے ہیں اور ضرور دیں گے۔چیئرمین جوائنٹ چیفس نے مزید کہا کہ افغانستان کا کوئی فوجی حل نہیں ہے، پاکستان چاہتا ہے کہ افغانستان میں امن بحال ہو اور وہاں کسی دہشتگرد تنظیم کا نیٹ ورک نہ ہو، افغانستان کی سرزمین پاکستان کے خلاف استعمال نہ ہو، افغانستان میں قیام امن کیلئےجاری مذاکرات کی حمایت کرتے ہیں۔ان کا کہنا تھاکہ پاکستان میں ماضی میں غلطیاں ہوئیں اور ہمیں ان غلطیوں سے سیکھنےکی ضرورت ہے۔

تازہ ترین خبریں