06:07 am
قومی اسمبلی،6 بلز قائمہ کمیٹیوں کو بھجوادیئے گئے

قومی اسمبلی،6 بلز قائمہ کمیٹیوں کو بھجوادیئے گئے

06:07 am

اسلام آباد(نامہ نگار خصوصی)قومی اسمبلی نے عائلی عدالتیں(ترمیمی)بل 2019،انسداد بد عنوانی(ترمیمی)بل 2019،بزور طاقت مذہب تبدیل کرنے کا بل 2019،ربا کا خاتمہ بل 2019،مقام کارپر خواتین کو ہراساں کرنے سے تحفظ فراہم کرنے کا(ترمیمی)بل 2019اور دستور(ترمیمی)بل 2019(آرٹیکلز51اور106)قائمہ کمیٹیوں کو بھجوا دیئے گئے، دستور(ترمیمی)بل 2019(آرٹیکل184)مسترد کر دیا گیا جبکہ امیگریشن(ترمیمی)بل 2019واپس لے لیا گیا۔قومی اسمبلی میں سید جاوید حسنین نے عائلی عدالتیں(ترمیمی)بل 2019پیش کیا ،وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم کی طرف سے اس بل کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بل قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔شیر اکبر خان نے انسداد بد عنوانی(ترمیمی)بل 2019 ایوان میں پیش کیا ،وفاقی وزیر فروغ نسیم کی طرف سے اس بل کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بل بھی قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔نوید عامر جیوانے بزور طاقت مذہب تبدیل کرنے کا بل 2019ایوان میں پیش کیا ، اس بل کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بل بھی قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔مولانا عبد الاکبر چترالی نے ربا کا خاتمہ بل 2019ایوان میں پیش کیا ، اس بل کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بل بھی قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔شاہدہ رحمانی نے مقام کارپر خواتین کو ہراساں کرنے سے تحفظ فراہم کرنے کا(ترمیمی)بل 2019ایوان میں پیش کیا، فروغ نسیم کی طرف سے اس بل کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بل بھی قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔ساجد خان اور محسن داوڑ نے دستور(ترمیمی)بل 2019(آرٹیکلز51اور106)بلز ایوان میں پیش کئے ،وفاقی وزیر فروغ نسیم کی طرف سے ان بلز کی مخالفت نہ ہونے پر یہ بلز بھی قائمہ کمیٹی کو بھجوا دیئے گئے۔عالیہ کامران نے دستور(ترمیمی)بل 2019(آرٹیکل184)ایوان میں پیش کیا،وفاقی وزیر فروغ نسیم نے اس بل کی مخالفت کی جس پر اس بل کو مسترد کر دیا گیا۔عالیہ کامران نے اس بل پر ووٹنگ کا مطالبہ کیا جس پر ڈپٹی سپیکر نے گنتی کا حکم دیدیا،بل کے حق میں 71جبکہ مخالفت میں 80ووٹ آئے۔نفیسہ عنایت اللہ خان خٹک نے امیگریشن(ترمیمی)بل 2019واپس لے لیا۔ بل پیش

تازہ ترین خبریں