06:07 am
طالبات جعلی ڈگری کیس ،ہائی کورٹ کا فیصلہ برقرار

طالبات جعلی ڈگری کیس ،ہائی کورٹ کا فیصلہ برقرار

06:07 am

اسلام آباد( نیوز ایجنسی )سپریم کورٹ نے دو طالبات کی جعلی ڈگریوں کے کیس سے متعلق ہائی کورٹ کا فیصلہ برقرار رکھتے ہوئے طالبات کی ڈگریوں کیخلاف دائر درخواست کو مسترد کردیا ہے ۔ کیس کی سماعت چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کی عدالت نے دوران سماعت قرار دیا کہ عائشہ عظمت اور عروبہ حشمت کے بہاولپور بورڈ کے سرٹیفکیٹ اصل اور تصدیق شدہ ہیں ان کو کہیں بھی چیلنج نہیں کیا گیا وکیل درخواست گزار نے اس موقع پر موقف اپنایا کہ 2011ء میں دونوں طالبات سکھر جامعہ ممتاز کالج میں زیر تعلیم رہیں جہاں انہوں نے رجسٹریشن کارڈ صادق آباد سے لینا تھے لیکن یہ سکھر چلے گئے جو فارم جمع کرائے گئے ہیں ان میں ایک میں صادق آباد درج کیا گیا ہے جبکہ باقی خالی ہیں دوسرے صوبے میں داخلے یا رجسٹریشن کیلئے مائیگریشن سرٹیفکیٹ کی ضرورت ہوتی ہے جبکہ یہاں پر طالبات نے رجسٹریشن کرنے کے بعد مائیگریشن سرٹیفکیٹ حاصل کیا چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سکھر کالج کے کاغذات اصل نکلے جبکہ بہاولپور بورڈ نے میٹرک سند کی تصدیق کی ہے جسے کئی بھی چیلنج نہیں کیا گیا سکھر کالج کے کاغذات کو بھی چیلنج نہیں کیا گیا یہ دونوں طالبات میڈیکل کالج میں پہنچ چکی ہیں عدالت نے دونوں طالبات کیخلاف دائر درخواست خارج کرتے ہوئے معاملہ نمٹا دیا ہے۔ برقرار

تازہ ترین خبریں