03:23 pm
اگر پرویز خٹک کو کسی نے زور سے پھونک ماردی تو پھر کیا ہوگا

اگر پرویز خٹک کو کسی نے زور سے پھونک ماردی تو پھر کیا ہوگا

03:23 pm

اسلام آباد(ویب ڈیسک)پاکستان مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر اور سابق صوبائی وزیر قانون رانا ثناءاللہ کا کہنا کہ موجودہ حکومت ہر بات پر چیخوں کی باتیں کرتی ہے، یہ عوام سندھ اور اپوزیشن کی چیخیں سننا چاہتے ہیں،ہر بار چور ڈاکو کا راگ الاپنے سے نااہلی چھپ نہیں سکتی ، پرویز خٹک کو کسی نے زور سے پھونک ماری تو پھر کیا ہوگا۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناءاللہ نے کہا
کہ موجودہ حکومت ہر بات پر چیخوں کی باتیں کرتی ہے، یہ عوام سندھ اور اپوزیشن کی چیخیں سننا چاہتے ہیں ،ہر بار چور ڈاکو کا راگ الاپنے سے نااہلی چھپ نہیں سکتی ، پرویز خٹک کو کسی نے زور سے پھونک ماری تو پھر کیا ہوگا؟ پرویز خٹک جیسے سینئر آدمی بھی ایسی باتیں کریں گے تو یہ ان کی بھول ہے ، موجودہ حکومت کی بھول ہے کہ ایوان میں شور شرابہ برپا کر کے وہ اپنی نااہلی چھپائیں گے ، عوام ان سے ضرورپوچھے گی ،یہ جو اَب کر رہے ہیں یہ چیزیں صرف تین ماہ تک چل سکتی تھیں ، دس ماہ بعد اس قسم کی حرکتیں نہیں کی جاسکتیں ،آئی ایم ایف کا معاہدہ ہوگیا، بجٹ کے بعد یہ حکومت نہیں چل سکتی ۔دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی جنرل سیکرٹری احسن اقبال نے کہا ہے کہ ہم نے ملک کو کسی بڑے بحران سے بچانا ہے تو پھر 2020 کو انتخابات کا سال بنانا پڑے گا نہیں تو ملک میں مارشل لا لگے گا یا کوئی غیر جمہوری مداخلت ہو گی ،میرا ذاتی طور پر یہ خیال ہے کہ کوئی اور چوائس نہیں رہ جائے گی کہ ہم مڈ ٹرم الیکشن کی طرف جائیں،بجٹ سیشن کے دوران شہباز شریف ملک میں موجود ہوں گے ،اگر کوئی اور ملک ہوتا تو سابق چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کے خلاف فراڈ کا کیس درج ہو جاتا،تحریک انصاف مریم نواز کی قیادت کو مزید مضبوط کرنے کے لئے کام کر رہی ہے۔نجی ٹی وی چینل ’’نیوز ون ‘‘ کے پروگرام ’’پرائم ٹائم وِد ٹی ایم ‘‘ میں گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کی تنظیم سازی میں کافی تاخیر ہوئی ہے، پچھلے ایک سال میں ہماری قیادت کیسز کی وجہ سے جیلوں میں رہی، پھر نواز شریف کی صحت کے مسائل کی وجہ سے تنظیم سازی میں تاخیر ہوئی، گزشتہ نومبر میں سینٹرل آگنائزر کمیٹی بنائی گئی تھی جس کا مجھے کنوینیر بنایا گیا تھا اور اس کمیٹی کو یہ ذمہ داری سونپی گئی تھی کہ پارٹی کے جو خالی عہدے ہیں ان کو پر کرنے کے لیے تمام صوبوں سے مشاورت کرکے تجاویز کو حتمی شکل دی جائے،ہم نےکوشش کی ہے کہ نئے لوگوں کو بھی موقعہ دیا جائے،اس دفعہ چار اہم عہدوں پر مرکز میں ہماری نوجوان پارلیمنٹرینز خواتین کو موقعہ دیا ہے تاکہ خواتین کو بھی مسلم لیگ (ن) میں زیادہ سے زیادہ موقع دیا جائے کہ وہ بھی ہمارے ساتھ شامل ہوں،مریم نواز سمیت جتنے لوگوں کو بھی عہدے دیئے گئے ہیں ان میں کوئی بھی غیر فعال نہیں ہے،ہماری یہ سخت شرط ہے کہ تمام عہدیداروں کو اپنے عہدے جسٹیفائی کرنے پڑیں گے ،اس لیے مریم نواز بحیثیت نائب صدر اپنے عہدے کو سرگرمی سے ادا کریںگی ،اُنہوں نے مختصر عرصے میں اپنی جگہ بنائی ہے،ہم چاہتے ہیں کہ پارٹی کو مضبوط کریں، ہمیں یقین ہے کہ ان کی انڈیکشن سے پارٹی مضبوط ہوگی،تحریک انصاف مریم نواز کی قیادت کو مزید مضبوط کرنے کے لئے کام کر رہی ہے،پی ٹی آئی والے مریم نواز سے اتنے خوف زدہ ہیں اور مریم نواز کا اتنا ہوا اُن پر سوار ہے جو سب دیکھ رہے ہیں۔احسن اقبال کا کہنا تھا کہ حکومتی اقدامات سے60سے70فیصدمزیدمہنگائی آئےگی اور ملک میں تبدیلی لانےکیلئےلائحہ عمل پراتفاق کرناپڑےگا، ملکی مسائل کوٹیسٹ ٹیوب قیادت حل نہیں کرسکتی، معاشی بدحالی سےملک میں انارکی پیداہوسکتی ہے،مہنگائی 25 فیصد بڑھی تو ملک میں انارکی پھیل جائے گی کیونکہ بد حالی سے انارکی پھیل سکتی ہے ،

تازہ ترین خبریں