03:33 pm
 سمندری حدود میں ڈرلنگ کا کام مکمل، تیل و گیس کے ذخائر دریافت نہ ہو سکے

سمندری حدود میں ڈرلنگ کا کام مکمل، تیل و گیس کے ذخائر دریافت نہ ہو سکے

03:33 pm

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک )کراچی کے ساحل سے 230کلومیٹر دور کھودے جانے والے کنویں سے تیل و گیس کے ذخائر نہ مل سکے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈرلنگ کمپنی نے 5ہزار470میٹر کھدائی کی اور حاصل ہونے والے سیپمل لیبارٹری میں بھیجے جس کی رپورٹ میں یہ کہا گیا ہے کہ سمندر میں کھودے جانے والے کنویں میں تیل و گیس کے مطلوبہ ذخائر حاصل نہیں ہو سکے۔
ڈرلنگ کرنے والی کمپنی نے منصوبے کی ناکامی کے بعد کھودا جانے والا کنواں بند کرنے کا کام شروع کر دیا ہے۔ یاد رہے کہ کراچی کے ساحل سے 230کلومیٹر دور سمندر میں تیل کے ذخائر کا امکان ظاہر کیا گیا تھا جس کے بعد ایگزون کمپنی نے سمندر میں کھدائی کا کام شروع کر دیا تھا اور 4ماہ تک کھدائی کے بعد 5ہزار میٹر گہرائی سے سیمپل لیے گئے تھے جنہیں ٹیسٹ کے لیے لیبارٹری بھیجا گیا تھا ، ذرائع کے مطابق ٹیسٹ کی رپورٹ آ گئی ہے جس میں یہ پتا چلا ہے کہ کنویں میں تیل کے مطلوبہ ذخائر موجود نہیں ہیں جس کی رپورٹ وزیراعظم عمران خان کو بھی بھیج دی گئی ہے۔

تازہ ترین خبریں