04:01 pm
بریگیڈئیر (ر) راجہ رضوا ن کی ملک دشمن سرگرمیوںکی تفصیلات سامنے آگئیں

بریگیڈئیر (ر) راجہ رضوا ن کی ملک دشمن سرگرمیوںکی تفصیلات سامنے آگئیں

04:01 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) دو روز قبل پاک فوج کے سابق افسران کو غداری اور کرپشن کے جرائم میں مختلف سزائیں سنائی گئیں۔ ان میں سے ایک نام بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان کا بھی تھا۔ بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان کی وطن ،ضمیر اور ایمان فروشی کے حوالے سے ہولناک تفصیلات منظر عام پر آگئی ہیں ۔ وہ جرمنی میں ایک ڈیفنس اتاشی کے طور پر تعینات تھے جب کہ اس سے قبل وہ ویانا آسڑیا میںتعینات تھے۔
بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان نے برلن (جرمنی) میں قائم بھارتی ہائی کمیشن اور یورپی یونین کے را ڈیسک کو انتہائی حساس معلومات صرف دو ملین ڈالرز میں فروخت کیں۔ بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان نے ہتھیاروں کی ایک نجی کمپنی کا بھی کاروبار چلایا جس کے تحت وہ ہتھیار افریقی ممالک کو فروخت کرتے رہے۔جرمنی میں مقیم ایک پاکستانی نژاد ڈاکٹر بھی ان کے ساتھ مل کر کام کرتا رہا۔ بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان نے پاکستان کے ہتھیاروں کےمعاہدوں،مستقبل کے پلان اور ریڈار سسٹم کے انتہائی خفیہ اور حساس نوعیت کے عسکری رازوں کا پیسوں کے عوض سوداکیا۔تاہم اس سارے سلسلے کا سب سے بھیانک پہلویہ ہے کہ بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان دو مرتبہ برلن میں قائم بھارتی ہائی کمشین میں خود گئے جہاں انھوںنے زبانی اور نقشوں پر مبنی حساس عسکری معلومات کاتبادلہ کیا ۔یہ کرہ ارض پر موجود اپنے بدترین دشمن کے ہاتھ اپنی مادر وطن کے راز فروخت کرنے کی سب سے گھنائونی مثال تھی۔ بریگیڈئیر (ر)راجہ رضوان کو پاکستان کے خفیہ ادارے آئی ایس آئی نے کئی ماہ کی مسلسل نگرانی کے بعد ایک انٹیلی جنس آپریشن کے ذریعے اسلام آباد سے حراست میں لے لیا تھا۔

تازہ ترین خبریں