01:40 pm
عدالت کے اندر بیٹھ کر سابق صدر کیا کام کرتے رہے

عدالت کے اندر بیٹھ کر سابق صدر کیا کام کرتے رہے

01:40 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف علی زرداری کو احتساب عدالت پہنچا دیا گیا ۔ تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں داخل ہوتے ہی آصف علی زرداری نے ڈان کا انداز اپنا لیا اور جج کے آنے سے قبل سگریٹ سُلگا لیا۔ آصف علی زرداری نے سگریٹ کے کش لگائے جس کے بعد فاروق ایچ نائیک نے انہیں منع کیا تو انہوں نے سگریٹ بُجھا دیا۔خیال رہے کہ گذشتہ روز بھی جب آصف علی زرداری کو نیب ہیڈ کوارٹر منتقل کیاگیا تھا تو وہ پریشان نہیں تھے اور مسلسل مُسکرا رہے تھے جس پر ویڈیو بنانے والے نے ان سے سوال کیا کہ صدر صاحب آپ تو ہنس رہے ہیں، کیا آپ کے ضمیر پر کوئی بوجھ نہیں ہے؟ کیونکہ یہاں تو جو بھی آتا ہے رو لیتا ہے۔
جس پر آصف علی زرداری نے ایک زور دار قہقہہ لگایا اور کمرے کے اندر داخل ہو گئے۔ خیال رہے کہ سابق صدر آصف علی زرداری کو سخت سکیورٹی میں نیب کورٹ لایا گیا۔ اس موقع پر جوڈیشل کمپلیکس کے باہر پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے۔ احتساب عدالت کو جانے والے تمام راستوں کو بند کردیا گیا ہے جب کہ جوڈیشل کمپلیکس کے اردگرد سکیورٹی کے لیے 1500 اہلکاروافسران تعینات کیے گئے ہیں۔ پولیس کی جانب سے جوڈیشل کمپلیکس میں غیر متعلقہ افراد اور سیاسی کارکنوں کو داخلے کی اجازت بھی نہیں دی جا رہی ۔ نیب کورٹ لانے سے قبل سابق صدر آصف علی زرداری کا میڈیکل چیک اپ بھی کروایا گیا ۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق صدر آصف علی زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کی درخواست ضمانت کو مسترد کردیا تھا۔ جس کے بعد نیب کی ٹیم ان کی گرفتاری کے لیے روانہ ہوئی ۔ آصف علی زرداری کو زرداری ہاؤس سے حراست میں لیا گیا تھا جس کے بعد انہیں نیب ہیڈ کوارٹر منتقل کر دیا گیا تھا۔

تازہ ترین خبریں