07:16 am
یہ وہ بجٹ ہے جو نئے پاکستان کے نظریے کی عکاسی کرے گا، وزیر اعظم

یہ وہ بجٹ ہے جو نئے پاکستان کے نظریے کی عکاسی کرے گا، وزیر اعظم

07:16 am

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) وزیراعظم عمران خان نے گزشتہ دو حکومتوں کے 10 سال کے دوران ملک پر 24 ہزار ارب قرضہ چڑھنے کی تحقیقات کے لیے کمیشن بنانے کا اعلان کردیا اور کہا ہے کہ کسی کو بھی این آر او نہیں ملے گا۔ بجٹ کے بعد سرکاری ٹی وی پر قوم سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ یہ وہ بجٹ ہے جو نئے پاکستان کے نظریے کی عکاسی کرے گا،
نیا پاکستان ریاست مدینہ کے اصولوں پر عظیم ملک بننے جارہا ہے، مدینہ کی ریاست کے جو اصول ہیں وہ مغربی دنیا میں ہیں لیکن افسوس کے ساتھ کہ یہ اصول ہمارے ہاں نہیں، وہ اصول یہ ہیں کہ حکمراں جواب دہ ہوں۔ وزیر اعظم نے کہا کہ 10 سال میں ملک پر 24 ہزار ارب روپے قرضہ کیسے ہوگیا؟ ان دونوں جماعتوں نے ملک کو تباہ کرنے کی پوری کوشش کی انہیں کوئی فکر نہیں کہ ملک میں کیا ہو کیوں کہ ان کے اربوں ڈالر باہر پڑے ہوئے ہیں، 22 سال سے کہہ رہا ہوں کہ ملک کا سب سے بڑا مسئلہ کرپشن ہے، 10 سال میں اس ملک پر اتنا قرضہ کیسے چڑھا؟ اس بات کی مکمل تحقیقات کی جائیں گے چاہے میری جان چلی جائے میں کرپشن کے خلاف جنگ جاری رکھوں گا اور پیچھے نہیں ہٹوں گا۔

تازہ ترین خبریں