11:26 am
 آئین کی حدود پار کیا جائے گی تو وفاق کو خطرہ ہو گا،خواجہ آصف

آئین کی حدود پار کیا جائے گی تو وفاق کو خطرہ ہو گا،خواجہ آصف

11:26 am

اسلام آباد (مانیٹر نگ ڈیسک )پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف نے کہا ہے کہ جب آئین کی حدود کو پار کیا جائے گا تو وفاق کو خطرہ ہو گا،ایسے اقدامات سے گریز کیا جائے جس سے وفاق خطرے میں پڑ جائے۔ ہم ایوان میں تناؤ نہیں چاہتے مگر ایسا ماحول یہاں نہ بنایا جائے ۔قومی اسمبلی میں بجٹ بحث میں حصہ لیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جب اس ایوان میں تناؤ ہوتا ہے تو ملک بھر میں اس کا اثر ہوتا ہے ۔ نوازشریف تین بار وزیر اعظم رہےاورانہوں نے ایک کروڑ لوگوں کے ووٹ لئے۔خواجہ آصف نے کہا کہ عدالتی فیصلوں کا احترام کرتے ہیں ،پہلے نوازشریف کو ہٹایا گیا پھر گرفتار کیا گیا مگرنوازشریف کا بیانیہ دن بدن مضبوط ہورہا ہے۔ ان کا بیانیہ ووٹ کو عزت دو ہے ۔
سابق وزیر خارجہ نے کہا کہ نوازشریف کو چوتھی بار وزیر اعظم بننے کی خواہش نہیں ،یہ فیصلہ عوام کریں کہ وزیر اعظم کون ہو؟ نوازشریف ملک میں آئین و قانون کی بالادستی چاہتے ہیں ۔خواجہ آصف نے کہا ہم نے اپنی حکومت میں سیاسی گرفتاریاں نہیں کیں، ہم نے آزاد کشمیر میں حکومت بدلی نہ کے پی میں بدلی ،نوازشریف نے دن رات ایک کرکے بجلی پیدا کی،اس نوازشریف کی کل اپنے ورکرز اور خاندان کے لوگوں سے ملاقاتیں نہ ہونے دی گئیں۔انہوں نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کی بدقسمتی ہے کہ پارٹیاں بدلنے والے اگلی نشستوں پر بیٹھتے ہیں۔اس پر اسپیکر اسد قیصر نے کہا کہ انہوں نے رانا ثنااللہ سے کہا تھا الیکشن قوانین میں ترمیم ہونی چاہئے کہ پارٹیوں میں شفاف الیکشن ہوں،سیاسی جماعتوں کے انتخابات میں کارکنان کو منتخب ہونے کا ملنا چاہئے۔خواجہ آصف نے کہا وفاداریاں تبدیل کرنے والے گندی زبان استعمال کرتے ہیں۔ یہ پارٹیوں کو لڑاتے ہیں۔