03:14 pm
جج نے جھوٹ بولا ہے، نوازشریف سے اسکی کوئی ملاقات نہیں ہوئی، شاہد خاقا ن عباسی

جج نے جھوٹ بولا ہے، نوازشریف سے اسکی کوئی ملاقات نہیں ہوئی، شاہد خاقا ن عباسی

03:14 pm

لاہور (آئی این پی)پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما و سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ نواز شریف سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی، جج نے جھوٹ بولا ہے، جب حکومت دبانا شروع کر دے عدالتوں پر پریشر ہو تو ملک کھوکھلا ہو جاتا ہے، میں صرف جنرل ناصر جنجوعہ کو جانتا ہوں اور کسی دوسرے ناصر جنجوعہ کو نہیں جانتا، حکومت نے ثابت کرنا ہے کہ وہ خریدنے والے نہیں ہیں۔جمعہ کو میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے
کہ رانا ثناءاللہ کا کیس عوام کے سامنے رکھا جائے، رانا ثناءاللہ کے ساتھ کسی کو بھی ملاقات کی اجازت نہیں ہے، رانا ثناءاللہ کے علاج معالجے کا کوئی بندوبست بھی نہیں ہے، حکومتی وزیر اور اے این ایف کے ڈی جی نے پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ بہت بڑا کیس ہے لیکن آج ایک دن کا بھی جسمانی ریمانڈ نہیں لیا جبکہ انہیں 12روز قبل گرفتار کیا گیا، رانا ثناءاللہ کے کیس میں ملک کا بچہ بچہ کہتا ہے کہ یہ جھوٹا کیس ہے اور اب حکومت اس کیس سے دور ہوتی جا رہی ہے جبکہ کوئی شخص اس کیس کو تسلیم نہیںکرتا، یہ صرف رانا ثناءاللہ کی آواز کو دبانا ہے، آج صرف اذیت اور پریشانی کرنے کےلئے کیس بنایا گیا ہے، نواز شریف کے کیس میں لوگوں نے دیکھ لیا، جو باتیں ہم کیا کرتے تھے کہ ملک میں انصاف نہیں مل رہا ہے، انصاف کا نظام دباؤ میں ہے، ہم احتساب چاہتے ہیں، لیکن وہ نہیں جو یہ نیب کر رہا ہے، چیئرمین سینیٹ کے معاملے یں آج جمہوریت کی فتح ہے، حاصل بزنجو ایک کردار کے مالک شخصیت ہیں، 67 ارکان نے ان پر اعتماد کیا ہے،جج نے ایک ویڈیو میں کہا تھا کہ ان پر دباؤ تھا، ابھی ایک بیان حلفی دیا ہے، پہلے پریس ریلیز جاری کی تھی اب شائد انٹرویو دے دیں، لیکن ان کی باتوں پر تضاد سامنے آرہا ہے، میڈیا پر پابندی پر عمران خان اور شاہ محمود قریشی کو شرم نہیں آتی مگر ہمیں شرم آتی ہے، یہ حالات دیکھ کر کہ باہر ملک میں لوگ وزیرخارجہ سے میڈیا پر سنسر شپ سوال کرتے ہیں، ان عدالتوں کے فیصلے احترام کے قابل نہیں ہیں، یہ دباؤ کے فیصلے ہیں، جب حکومت دبانا شروع کر دے عدالتوں پر پریشر ہو تو ملک کھوکھلا ہو جاتا ہے، میں صرف جنرل ناصر جنجوعہ کو جانتا ہوں اور کسی دوسرے ناصر جنجوعہ کو نہیں جانتا، نواز شریف سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی، جج نے جھوٹ بولا ہے، حکومت نے ثابت کرنا ہے کہ وہ خریدنے والے نہیں ہیں، عمران خان نے جج پر دباؤ ڈالا، آج کیا ضرورت پیش آئی کہ بیان حلفی حکومتی وزراءنے دفاع کیا، عمران خان نے کہا کہ عدلیہ جانے اور جج جانے۔

تازہ ترین خبریں