05:05 pm
ڈالر کی ایک بار پھر اونچی چھلانگیں، قیمت میں ہوشربااضافہ

ڈالر کی ایک بار پھر اونچی چھلانگیں، قیمت میں ہوشربااضافہ

05:05 pm

کراچی (نیوز ڈیسک) انٹر بینک میں ڈالر ایک روپے 16 پیسے مہنگا ہو گیا ہے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ ڈالر نے ایک بار پھر اونچی چھلانگیں مارنا شروع کر دی ہیں۔آج انٹربینک میں ڈالر کی قیمت میں ایک روپے 16 پیسے اضافہ ہوا ہے جس کے بعد انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت 159.85 ہو گئی ہے۔ دو ہفتے قبل ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قیمت میں کمی دیکھنے میں آئی تھی۔روپے کی قیمت میں 5 سے 6 روپے تک کی کمی دیکھی گئی تھی
۔ تاہم گذشتہ ہفتے ڈالر کی قیمت میں پھر سے اضافے کا رجحان دیکھنے میں آیا۔ رپورٹ کے مطابق گذشتہ ہفتے کے دوران انٹر بینک اور مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کے مقابلے پاکستانی روپیہ کی قدر بدترین گرواٹ شکار رہی۔ انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر کی قدر میں 1.27روپے کا اضافہ ہوا۔جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدر میں2روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ انٹر بینک اور اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قدر157روپے سے بڑھ کر159روپے کی بلند سطح پر جا پہنچی۔ انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر1.27روپے بڑھ گئی جس سےڈالر کی قیمت خرید 157.38روپے سے بڑھ کر158.75روپے اور قیمت فروخت157.78روپے سے بڑھ کر159.05روپے ہو گئی۔ اسی طرح اوپن کرنسی مارکیٹ میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر میں2روپے کا نمایاں اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے ڈالر کی قیمت خرید156.50روپے سے بڑھ کر159روپے اور قیمت فروخت157.50روپے سے بڑھ کر159.50روپے پر جا پہنچی۔فاریکس رپورٹ کے مطابق یورو کی قدر ایک ہفتے میں2.50روپے بڑھ گئی جس سے یورو کی قیمت خرید 175روپے سے بڑھ کر178.50روپے اور قیمت فروخت178روپے سے بڑھ کر180.50روپے ہو گئی اسی طرح 3.50روپے کے نمایاں اضافے سے برطانوی پونڈ کی قیمت خرید 195روپے سے بڑھ کر199.50روپے اور قیمت فروخت198روپے سے بڑھ کر201.50روپے ہو گئی۔ فاریکس رپورٹ کے مطابق گذشتہ روز مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں روپے کے مقابلے ڈالر20پیسے مہنگا ہو گیا جبکہ یورو کی میں1روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ برطانوی پونڈ30پیسے سستا ہو گیا ۔ڈالر کی قدر میں اضافے کے حوالے سے معاشی ماہرین کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف سے معاہدے کے باوجود ڈالر کی قدر میں اضافہ بیرونی ادائیگیوں کا نتیجہ ہے۔ آئی ایم ایف معاہدے کے بعد اب پاکستان کو دیگر مالیاتی اداروں سے بھی بیرونی قرضے ملیں گے، جس سے ناصرفزرمبادلہ ذخائر میں اضافہ ہوگا، بلکہ ڈالر کی قیمت میں بھی کمی دیکھنے میں آئے گی۔

تازہ ترین خبریں