01:21 pm
فریضہ حج کیلئے جانیوالے شاہ محمود قریشی کا اچانک پاکستان واپس آنے کا فیصلہ

فریضہ حج کیلئے جانیوالے شاہ محمود قریشی کا اچانک پاکستان واپس آنے کا فیصلہ

01:21 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)فریضہ حج کیلئے جانیوالے شاہ محمود قریشی کا اچانک پاکستان واپس آنے کا فیصلہ۔۔۔ مقبوضہ کشمیر کی کشیدہ صورتحال کے پیش نظر وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے وطن واپسی کا فیصلہ کر لیا۔ تفصیلات کے مطابق بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کیے جانے کے بعد وہاں پیدا ہونے والی کشیدہ صورتحال کے پیش نظر وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے پاکستان واپس آنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی گذشتہ روز فریضہ حج کی ادائیگی کے لیے مکہ مکرمہ پہنچے تھے۔ یاد رہے کہ بھارت نے گذشتہ روز مقبوضہ کشمیر سے متعلق بھارتی آئین میں موجود آرٹیکل 370 ختم کر دیا جس کے بعد مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم ہو گئی۔ ایسے میں جہاں سیاسی و سماجی رہنماؤں نے بھارت کے اس اقدام کی مذمت کی وہیں پاکستان کے وزیراعظم عمران خان ، وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی غائب رہے اور بھارت کے اس قابل مذمت اقدام پر نہ تو کوئی بیان دیا اور نہ ہی کشمیریوں کے حق میں آواز اُٹھائی۔ شاہ محمود قریشی گذشتہ روز سعودی عرب روانہ ہوئے تھے جس کے بعد انہیں تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔ قومی ٹی وی چینل پی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے گذشتہ روز شاہ محمود قریشی نے کہا تھا کہ میں ابھی سعودی عرب میں موجود ہوں ، احرام کی حالت میں ہوں۔ میں حج کی سعادت حاصل کرنے آیا ہوں۔ میری نظروں کے سامنے لاکھوں مسلمانوں کا طواف جاری ہے۔ میری ان سے درخواست ہے کہ وہ کشمیریوں کی کامیابی اور ان کی فتح کے لیے دعا کریں۔ ان کی کامیابی کے لیے خانہ کعبہ میں گڑ گڑا کر دعائیں کریں اور ان سے اظہار یکجہتی کریں۔ میری پوری اُمہ کی قیادت سے درخواست ہے کہ وہ مزید خاموش نہ رہیں اور اپنا کردار ادا کریں۔ ہمیں مل کر کشمیریوں کا ساتھ دینا ہو گا۔ جبکہ آج پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں عدم شرکت پر بھی وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔ جس کی بنیاد پر کئی صحافیوں نے ان سے استعفیٰ مانگنے اور انہیں کابینہ سے نکالنے کا مطالبہ بھی کیا۔

تازہ ترین خبریں