09:04 am
کسی کی موت پر خوش نہیں ہونا چاہئے مگر میں سشما سوراج کی موت پر بے حد خوش ہوں

کسی کی موت پر خوش نہیں ہونا چاہئے مگر میں سشما سوراج کی موت پر بے حد خوش ہوں

09:04 am

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی سابق وزیر خارجہ سشما سوراج انتقال کر گئیں، بی جے پی کی خاتون رہنما کو منگل کے روز دل کا دورہ پڑا جس کے بعد وہ چل بسیں۔ اس حوالے سے پاکستان تحریکِ انصاف کے اقلیتی رہنما اور رکن سندھ اسمبلی دیوان سچل نے خوشی کا اظہار کیا ہے۔ انہوعں نے اپنے ٹویٹر پیغام میں کہا ہے کہ ’’مجھے کسی کے مرنے پہ خوش نہیں ہونا چاہیے لیکن سشما سوراج کی موت پہ میں خوش ہوں، میں اس خوشی کو ختم نہیں کر سکتا، اگر اس نے مجھے غلط سمجھا جائے گا تو ایسے ہی صحیح، سشما سوراج کی آخری ٹویٹ سے پتا چلتا ہے
کہ اسے کشمیر میں معصوم مسلمانوں کی فکر نہیں تھی، اس لیے مجھے اس کی موت سے فرق نہیں پڑتا‘‘۔ واضح رہے کہ اچانک موت واقع ہونے سے قبل سشما سوراج کی جانب سے کشمیر تنازعے سے متعلق کیا گیا ٹوئٹ کیا تھا کہ وہ نریندر مودی کی شکر گزار ہیں، انہیں نے اس دن کیلئے اپنی تمام عمر انتظار کیا تھا۔ واضح رہے کہ منگل کے روز بھارت کی نامور سیاستدان اور سابق وزیر خارجہ سشما سوراج کا انتقال ہو گیا۔ بھارتی میڈیا کی جانب سے فراہم کردہ مزید تفصیلات کے مطابق منگل کے روز سوشما سوراج کو دل کا دورہ پڑا، جس کے بعد انہیں فوری ہسپتال لے جایا گیا۔ تاہم ہسپتال پہنچنے تک سوشما سوراج انتقال کر چکی تھیں۔ انتقال کے وقت سوشما سوراج کی عمر 67 برس تھی۔ سوشما سوراج مودی کے گزشتہ دور حکومت میں وزیر خارجہ کے عہدے پر براجمان تھیں اور بھارتی حکومت کی دوسری طاقتور ترین شخصیت تصور کی جاتی تھیں۔ تاہم رواں برس نریندر مودی نے الیکشن جیتنے کے بعد حیران کن طور پر سشما سوراج کو وزارت خارجہ کا قلمدان نہیں سونپا تھا۔ سشما سوراج کافی عرصے سے منظر عام سے غائب تھیں، اور اب ان کا انتقال ہوگیا ہے۔