09:03 am
پاکستانی آم،تربوز، نمک،ملتانی مٹی اورکرتے بھارتیوں کو نہیں ملیں گے

پاکستانی آم،تربوز، نمک،ملتانی مٹی اورکرتے بھارتیوں کو نہیں ملیں گے

09:03 am

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) بھارت کی انتہا پسند مودی حکومت نے مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے آئین میں درج شق 370 کا خاتمہ کیا تو پاکستان نے ہندوستان سے اپنی تجارتی سرگرمیاں معطل کردیں۔ پاک بھارت تجارتی سرگرمیوں کے تعطل سے بھارتی متعدد ایسی اشیا سے محروم ہو جائیں گے جو انہیں بہت پسند و مرغوب ہیں۔اعداد و شمار کے مطابق پاکستان سے ہندوستان بھیجی جانے والی اشیا میں 2016-17 کی نسبت 2017-18 میں اضافہ ہوا تھا۔ ہندوستانی اعداد و شما رکے مطابق 2016-17 میں پاکستان نے بھارت کو 455.5 بلین امریکی ڈالرز کی اشیا درآمد کی تھیں
جو 20107-18 میں بڑھ کر 488.5 بلین ڈالرز کی ہوگئی تھیں۔پاکستان سے بھارت جانے والی مقبول عام اشیا میں تربوز، خشک میوہ جات، آم، سمینٹ، چمڑے کا سامان، ملتانی مٹی، نمک، سلفر، پتھر، چونا، تیل، طبی آلات، عینکیں اور پٹرولیم اشیا شامل ہیں۔بھارتی اعداد و شمار کے مطابق پاکستانی آم کی بھارت میں بہت مانگ ہے جس کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ صرف 2017 میں ہندوستان نے 63 کروڑ روپے کے پھل پاکستان سے منگوائے تھے۔دستیاب اعداد و شمار بتاتے ہیں کہ پاکستان سے بھارت سوتی کپڑا، اسٹیل اور تانبہ جاتا ہے۔ چینی سے تیار ہونے والی بچوں کی کنفیکشنری بھی پاکستان سے ہی منگوائی جاتی ہیں۔دلچسپ امر ہے کہ مشہور پاکستانی برانڈ ’جے ڈاٹ‘ (جنید جمشید) کے تیار کردہ کرتے بھارتیوں میں بہت مقبول ہیں اور وہ انتہائی ذوق و شوق سے خریدتے و پہنتے ہیں۔ جے ڈاٹ کے کرتے بھارتی ایک دوسرے کو تحفتاً بھی پیش کرتے ہیں۔بھارت میں لاہور کے تیار کردہ پشاوری سوٹ کی بہت مانگ ہے اور پشاوری چپل کے تو بھارتی دیوانے بتائے جاتے ہیں۔

تازہ ترین خبریں